Results 1 to 3 of 3

Thread: بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ

  1. #1
    Join Date
    Jul 2008
    Location
    Sialkot Pakistan
    Age
    31
    Posts
    2,056
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    31 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474848

    Default بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ

    السلام علیکم ورحمتہ اللہ برکاتہ

    i89371 iftar - بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ


    i89373 CuteMuslimBabyKidPraying281x375 - بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ

    بچوں كو روزہ ركھنے كى عادت ڈالنے كے وسائل كے متعلق تو اس كے ليے درج ذيل امور كو ديكھنا چاہيے:

    1 ـ انہيں روزے كے فضائل كى احاديث سنائى جائيں، اور يہ بتايا جائے كہ روزہ ركھنا جنت ميں داخل ہونے كا باعث بنتا ہے اور جنت ميں ايك مخصوص دروازہ ہے جس سے صرف روزے دار ہى جنت ميں داخل ہونگے، اس كا نام باب الريان ہے.

    2 ـ رمضان سے قبل ہى روزہ ركھنے كى عادت ڈالى جائے مثلا شعبان كے مہينہ ميں كچھ روزے ركھوائے جائيں؛ تا كہ انہيں رمضان المبارك ميں اچانك روزوں كا سامنا نہ كرنا پڑے.

    3 ـ شروع ميں دن كے كچھ حصہ كا روزہ ركھوايا جائے، اور آہستہ آہستہ اس ميں اضافہ كرتے ہوئے كسى روز سارے دن كا روزہ ركھوائيں.

    4 ـ سحرى بالكل رات كے آخرى حصہ ميں كھلائيں، كيونكہ ايسا كرنے ميں دن كو روزہ ركھنے ميں معاونت ہوتى ہے.

    5 ـ روزے ركھنے كى صورت ميں انہيں انعام دے كر حوصلہ افزائى كى جائے، روزانہ يا پھر ہفتہ وار انعام ديا جائے.

    6 ـ افطارى كے وقت خاندان كے افراد كى موجودگى ميں بچوں كى حوصلہ افزائى كرتے ہوئے ان كى تعريف كى جائے، اور اسى طرح سحرى كے وقت بھى، كيونكہ ايسا كرنے سے ان كا حوصلہ بڑھتا ہے.

    7 ـ جس كے ايك سے زيادہ بچے ہوں وہ ان ميں ايك دوسرے سے سبقت لے جانے كى روح پيدا كرے كہ نيكى ميں ايك دوسرے سے آگے نكلنا افضل ہے، ليكن پيچھے رہنے والے كى ڈانٹ ڈپٹ مت كرے.

    8 ـ اگر كسى بچے كو بھوك لگ جائے تو وہ اسے بہلا پھسلا كر سلا دے، يا پھر مباح اور جائز قسم كى كھيل ميں لگانے كى كوشش كرے، جس ميں تھكاوٹ نہ ہوتى ہو، جيسا كہ صحابہ كرام اپنے بچوں كے ساتھ كيا كرتے تھے، بچوں كے ليے مناسب قسم كے پروگرام اور كھيل اور كارٹون پائے جاتے ہيں جو بااعتماد اسلامى ٹى وي چينلز پر پيش كيے جاتے ان سے استفادہ كيا جا سكتا ہے.

    9 ـ افضل اور بہتر يہ ہے كہ والد عصر كے بعد بيٹے كو مسجد ميں لے جائے تا كہ نماز اور دروس وغيرہ ميں شريك ہو، اور وہيں مسجد ميں رہ كر قرآن مجيد كى تلاوت اور اللہ كا ذكر كرتا رہے.

    10 ـ دن اور رات كے وقت ان خاندانوں كے افراد كے ليے وقت مخصوص كيا جائے جن كے چھوٹے بچے روزہ ركھتے ہيں؛ تا كہ بچوں ميں مستقل مزاجى پيدا ہو اور وہ روزے ركھتے رہيں.

    11 ـ افطارى كے بعد انہيں مباح قسم كے سفر اور ٹور كے انعام سے نوازا جائے، يا پھر ان كى دل پسند ڈش پكا كر اور پسنديدہ پھل لا كر ديے جائيں.

    يہاں ہم ايك چيز پر متنبہ كرنا چاہتے ہيں كہ اگر بچہ كو زيادہ بھوك لگ جائے اور روزہ برداشت نہ ہو تو انہيں روزہ مكمل كرنے پر اصرار نہ كريں؛ تا كہ وہ اس كے باعث عبادت سے بغض نہ كرنا شروع كر ديں، يا پھر اس كے باعث وہ جھوٹ نہ بولنے لگيں، يا مرض زيادہ نہ ہو جائے، كيونكہ وہ ابھى مكلف نہيں، اس ليے اس پر متنبہ رہنا چاہيے، اور اس مسئلہ ميں تشدد سے كام نہيں لينا چاہيے.

    واللہ اعلم .

  2. #2
    Join Date
    Jul 2008
    Location
    Sialkot Pakistan
    Age
    31
    Posts
    2,056
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    31 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474848

    Default Re: بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ

    بچوں كو روزہ ركھنے كى عادت ڈالنے كے ليے كونسى عمر مناسب ہے ؟


    بالغ ہونے سے قبل چھوٹے بچے پر روزہ ركھنا واجب نہيں كيونكہ رسول كريم صلى اللہ عليہ وسلم كا فرمان ہے:

    " ميرى امت ميں سے تين قسم ( كے لوگوں ) سے قلم اٹھا ليا گيا ہے، مجنون اور پاگل اور بے عقل سے جب تك كہ وہ ہوش ميں آجائے، اور سوئے ہوئے سے جب تك كہ وہ بيدار ہو جائے، اور بچے سے جب تك كہ وہ بالغ ہو جائے"

    سنن ابو داود حديث نمبر ( 4399 )

    رسول كريم صلى اللہ عليہ وسلم كا فرمان ہے:

    " جب بچے سات برس كے ہو جائيں ت وانہيں نماز ادا كرنے كا حكم دو، اور دس برس كے ہو جائيں تو نماز ادا نہ كرنے پر انہيں مارو، اور بستروں ميں انہيں عليحدہ كر دو "

    سنن ابو داود حديث نمبر ( 495 )


    اور روزے كے متعلق حديث سے ثابت ہے كہ صحابہ كرام اپنے چھوٹے بچوں كو روزے ركھوايا كرتے تھے:

    ربيع بنت معوذ بن عفرا رضى اللہ تعالى عنہا بيان كرتى ہيں كہ:

    " رسول كريم صلى اللہ عليہ وسلم نے يوم عاشوراء كے دن مدينہ كے ارد گرد رہنے والے انصار كى طرف ايك شخص كو يہ پيغام دے كر بھيجا كہ:

    " جس نے روزہ ركھا ہے وہ اپنا روزہ پورا كرے، اور جس نے روزہ نہيں ركھا وہ باقى سارا دن بغير كھائے پيے گزارے "

    چنانچہ اس كے بعد ہم روزہ ركھا كرتے تھے، اور ان شاء اللہ اپنے چھوٹے بچوں كو بھى روزہ ركھواتے اور ہم مسجد جاتے تو بچوں كے ليے روئى كے كھلونے بنا ليتے، جب كوئى بچہ بھوك كى بنا پر روتا تو ہم اسے وہ كھلونا دے ديتے "

    صحيح بخارى حديث نمبر ( 1960 ) صحيح مسلم حديث نمبر ( 1136 )




  3. #3
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    manchester
    Age
    32
    Posts
    11,319
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    49 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474857

    Default Re: بچوں كو روزے كى عادت ڈالنے كا طريقہ

    very usefull post ....
    jazakALLAH

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •