Results 1 to 1 of 1

Thread: کیا ایسے کم سُخن سے کوئی گُفتگو کرے

  1. #1
    Join Date
    Aug 2011
    Location
    SomeOne H3@rT
    Age
    31
    Posts
    2,331
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    825 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    429507

    کیا ایسے کم سُخن سے کوئی گُفتگو کرے

    کیا ایسے کم سُخن سے کوئی گُفتگو کرے
    جو مُستقل سکوت سے دِل کو لہو کرے

    اب تو ہمیں بھی ترکِ مراسم کا دُکھ نہیں
    پر دِل یہ چاہتا ہے کہ آغاز تُو کرے
    ...
    تیرے بغیر بھی تو غنیمت ہے زندگی
    خود کو گنوا کے کون تیری جُستجو کرے

    اب تو یہ آرزو ہے کہ وہ زخم کھا ئیے
    تا زندگی یہ دِل نہ کوئی آرزو کرے

    تُجھ کو بھلا کے دِل ہے وہ شرمندہءِ نظر
    اب کوئی حادثہ ہی تیرے روبرو کرے

    چُپ چاپ اپنی آگ میں جلتے رہو فراز
    دُنیا تو عرضِ حال سے بے آبرو کرے

    احمد فراز
    Last edited by T@nHA.D!L; 25-02-2012 at 08:53 AM.

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •