Results 1 to 1 of 1

Thread: Gentalmen Bismillah Ashfaque Hussain

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default Gentalmen Bismillah Ashfaque Hussain


    خود کو وردی میں ملبوس دیکھا تو ایک عجیب کیف سا طار ی ہو گیا۔ دو چار شعر بھی سرزد ہو گئےؔ
    بے نام سی یہ اک وردی ہے
    پر اتنی ہم پر سجتی ہے
    شہزادے سے ہم لگتے ہیں
    ہر لڑکی ہم پر مرتی ہے
    شعر تو افسر بننے کے بعد بھی وارد ہوتے رہے ہم پر لیکن ان میں احساسات کا رنگ ذرا مختلف ہے۔ حال ہم میں اپنی زبوں حالی پر ہم نے ایک طویل نظم لکھی جس کا ہر بند اس مصرع پر ٹوٹتا تھاؔ
    ہر لڑکی ہم سے ڈرتی ہے
    لیکن یہ ذکر اس وقت کا ہے جب ہم اکیڈمی کی طرف رواں دواں بین الاقوامی معاملات پر تدبر فرمارہے تھے۔
    برطانیہ۔۔۔ کیپٹن فلپ۔۔۔۔۔ شہزادی این۔۔۔۔۔ کیپٹن اشفاق۔۔۔ ہر جہت پھولوں کی کیاریاں۔۔۔۔ مخملیں سبزے کا فرش' روش روش مہکتے گلزار' دہکتے گلاب' شفاف پانی کے خوبصورت جھرنے' گھنے پیڑوں کی چھاوں میں نازنیں کلیوں کے بستر اور اس پر براجمان نازک اندام پھولوں کی ایک شہزادی کسی ہم ایسے افسر کی آمد کی منتظر۔۔۔۔ اک شان دلربائی سے ہم اس کی طرف بڑھے۔۔
    ایک لمحے کو ٹھٹکے' بھئ کوئی تحفہ تو ساتھ لے لیں۔ کیا ہونا چاہئے؟
    "پکوڑے ! گرما گرم پکوڑے! پان! سگرے۔۔۔یٹ
    مختلف ہاکروں کی چیخ و پکار نے ہمیں حقیقت کی دنیا میں لا کھڑا کیا۔ بس حویلیاں پہنچ چکی تھی۔
    جنٹلمین بسم اللہ' اشفاق حسین
    Last edited by Hidden words; 06-08-2012 at 09:41 PM.





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •