Results 1 to 1 of 1

Thread: Khuwaish

  1. #1
    Join Date
    Feb 2012
    Location
    karachi
    Posts
    845
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    142 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    0

    snow Khuwaish

    دل کے خزانوں میں خواہش کے رنگ ہزار ہیں۔ انسان کی زندگی خوا ہشات کے ارد گرد ہی رواں دواں ہوتی ہیں ہم اکثر خواہشات پر مبنی سوچوں کے درمیاں الجھ جاتے ہیں۔ کچھ اہم خواہشات ہی زندگی کا حسین ھدف کہلاتی ہیں ۔۔۔ تو کچھ خواہشات بے مقصد بے معنی ہونے کے باوجود انسان اس کی اتباع غلط راستوں پر چل کر کرتا ہے۔ تو کچھ منفی اور مؐضر بھی ہوتی ہے ۔ خواہشات کے دو پہلو ہوتے ہیں ۔ جائز اورناجائز کچھ نفس پرستی دنیاوی شان کے لئے تو کچھ اللہ کی محبت اور اس کی عبادت اور اس کی رضا کی تلاش کرتی ہیں ۔ کہیں انسان خواہشات کو پانے کے لئے اللہ سے دور ہوکر اپنی آرزو کو مکمل کرنے میں کافی جد وجہد اور مسلسل کوشیش جاری رکھتا ہیں۔ اور خواہشات کو ایک جنوں کی شکل دے دیتا ہیں۔ تو کہی کچھ خواہشوں کی ایک حد میں اپنا مقصد تلاش کرتی ہیں اکثر لوگ خواہشات کے پچھے بھاگتے رہتے ہے لیکن ان کی آرزو کبھی پوری نہیں ہوتی اور وہ اسی میں اللہ کی رضا سمجھ کر سر جھکا لیتے ہیں۔ ہر انسان کی خواہش پوری نہیں ہوتی۔ مایوسی کا یہ سفر انسان کو حزن و غم زدہ ادوار پر اکثر لے جاتا ہے۔ پھر بھی اس کی کمی کو مکمل کرنے انسان اپنی تلاش جاری رکھتا
    ہے۔

    کچھ انسان کو اللہ کی لاکھ نعمتیں ملتی ہیں اس کی ہر جائز خواہش پوری بھی پوتی ہیں تووہ اس مغرورزندگی کاعادی بن جاتا ہے ۔ دنیا کی جھوٹی شان اس کی خواہشات لالچ کے رنگ میں اسے رنگ لیتی ہے۔ اور وہ تمو حات کے سفر میں اس قدر کھو جاتا ہیں کے دنیا کی رونقوں میں مبتلا انسان خواہشات میں دنیا تو حاصل کر لیتا ہیں مگر آخرت کو بھولا دیتا ہیں۔ زندگی گزارنےکا نظریہ ہی بدل لیتا ہیں ۔ اس کی آرزو ایک کہ بعد ایک برپا ہوتی جاتی ہیں لیکن خواہشات کبھی ختم ہونے کا نام نہیں لیتی ۔ اوراس کی ایک حقیقت اسے دنیا کا راستہ دیکھاتی ہے اور اس کی دوسری حقیقت اللہ کے دوستوں کو عطا کی جاتی ہیں جنکہ دل میں رب سے ملنے کی خواہش اس کی رضا کی خواہش خانہء کعبہ کے دیدار کی خواہش کے سیوا کچھ نہیں ہوتا وہی سچے اہل ایمان ہوتے ہیں ۔ انھیں دنیا میں اور آخرت میں بھی کامیابی ملتی ہیں۔ یاد رکھوں خواہش پرست سب سے بڑا گمرہ ہے ۔ جو اللہ کی عبادت کو چھوڑ کر خواہشات کی اتباع کرتے ہے ۔ اس لیے خواہشات کو خود پر حاوی نا ہونے دو ۔ کیونکہ خواہش پرستی فساد کی وجہ بھی ہیں ۔ جو مل گیا اسی میں خوش اور مطمئن قلب رہو اور جو خواہش اگر ہوری نا ہوسکی تو اسی میں اللہ کی رضا سمجھ کر زندگی کے نظام کو ہنستے مسکراتے گزار دوں ۔ اللہ پاک ہمیں نیک خواہشات کی اتباع نصیب کریں ۔ آمین۔۔۔
    Last edited by Hidden words; 06-08-2012 at 08:18 PM.

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •