Results 1 to 7 of 7

Thread: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔


    جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    اور وہ دن جب میں نے فرار کا راستہ ڈھونڈ لیا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ حیران مت ہو کہیں وہ متوجہ نہ ہو جائیں۔ یقین کرو کہ فرار کا راستہ ہمیشہ کھلا ہوتا ہے بس ہم ہی میں وہاں سے گذرنے کی تاب نہیں ہوتی۔
    میں اس دن کی بات کر رہی ہوں جب مجھے محبت ہو گئی۔
    تم ضرور دل میں ہنس رہے ہو گے۔ محبت تو کوئی فرار نہ ہوا۔ یہ تو ارب ہا لوگ ساری زندگی کرتے ہیں۔ لاکھوں لوگوں کی والہانہ محبت غازی علم دن کو پھانسی کے تختے سے نہ اتار پائی۔ پاکستانی مٹی سے لامتناہی محبت کے دعوے اور کروڑوں لوگ پرائے دیسوں کو چلے گئے۔ تم سوچتے ہو گے کہ میں بھی کیسی پاگل ہوں۔ محبت کیلئے تو آج کل کوئی اچھی نوکری نہیں چھوڑتا، محبت کیلئے تو کوئی ایک رات نہیں جاگتا اور میں محبت میں فرار ڈھونڈنے چلی تھی۔
    میرے پاس اس سوال کا جواب نہیں ہے۔ کیونکہ میں انکی محبت کو نہیں جانتی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ میں تو بس اپنی محبت کو جانتی ہوں اور میری محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    میری محبت تو جبرئیل کے پروں کی مانند تھی۔ مشرق ےسے مغرب تک افق کو گھیرے ہوئے پر جن کی ایک پھڑپھڑاہٹ سے کائیناتیں سمٹ جاتی تھیں۔
    میری محبت تو بارش کی مانند تھی ویرانہ دل کی سب گھاٹیاں جس سے بھری جاتی تھیں۔
    میں پاتال سے پانیوں میں تیر کر بھی سمندر کے بوجھ سے آزاد تھی۔
    یہ پہلا دن تھا جب میں نے ان کے چہروں پر پریشانی بکھرتی دیکھی۔ وہ کھلبلی، وہ بھگدڑ جو مریض کی نبضیں ڈوبنے پر ڈاکٹروں میں مچ جاتی ہے۔
    وہ ادھر ادھر ٹہل رہے تھے (جیسے شکستِ ملال ممکن ہو)، بڑی بڑی کتابوں کو چھانٹ رہے تھے (جیسے محبت کا ابطال ممکن ہو)، لافانی دلائل دے رہے تھے (گویا مٹنے والوں سے قال ممکن ہو)۔

    سید اسد علی کی کتاب ‘‘شہر حقیقت میں کہانی لکھنا’’ سے ایک اقتباس





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  2. #2
    Join Date
    Feb 2009
    Location
    City Of Light
    Posts
    26,767
    Mentioned
    144 Post(s)
    Tagged
    10310 Thread(s)
    Thanked
    5
    Rep Power
    21474871

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    awesome



    3297731y763i7owcz zps9ed156a3 - جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    MAY OUR COUNTRY PROGRESS IN EVERYWHERE AND IN EVERYTHING SO THAT THE WHOLE WORLD SHOULD HAVE PROUD ON US
    PAKISTAN ZINDABAD











  3. #3
    Join Date
    Sep 2010
    Location
    Mystic falls
    Age
    29
    Posts
    52,044
    Mentioned
    326 Post(s)
    Tagged
    10829 Thread(s)
    Thanked
    5
    Rep Power
    21474896

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    khubsurat

    eq2hdk - جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

  4. #4
    Join Date
    Aug 2011
    Location
    SomeOne H3@rT
    Age
    31
    Posts
    2,331
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    825 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    429507

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    wow beautiful

  5. #5
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    Thanxx To alll





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  6. #6
    Join Date
    Mar 2010
    Location
    *In The Stars*
    Posts
    18,093
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    1271 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474862

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    gooD sharinG..../up




    Yahi Dastoor-E-ulfat Hai,Nammi Ankhon,
    Mein Le Kar Bhi,

    Sabhi Se Kehna Parta Hai,K Mera Haal,
    Behter Hai...!!


  7. #7
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    836 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1179
    Rep Power
    21474971

    Default Re: جبرائیل کے پروں کی مانند محبت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    صرف آواز نہیں ، لفظ بھی مقفل ہیں مرے

    سوچ میں ہوں کہ اب تجھ کو پکاروں کیسے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •