Results 1 to 8 of 8

Thread: Poet Club Comp May 2012

  1. #1
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    839 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1181
    Rep Power
    21474971

    candel Poet Club Comp May 2012

    Asalam.o.Alaikum

    Is Baar App Ko Nazm Likhni Hai...

    "Dil" Per

    Rules:

    Last Date 21 May 2012
    Apni Likhi Honi Chahiye..
    50 % Polling HOgi..
    or 50 % Admin Decide Karey Gai..

  2. #2
    Join Date
    Mar 2008
    Location
    Canada
    Posts
    25,300
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    442 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    11381699

    Default Re: Poet Club Comp May 2012

    تمہیں کیا خبر
    چند سطریں لکھنے کی خاطر
    سیہ کتنے ورق دل کے ہوتے ہیں
    اشکوں کے حرف
    پلکیں کس طرح بُنتی ہیں
    انگارے چنتی ہیں
    دل کس طرح ڈوبتا ہے
    اک لفظ محبت پر
    اور اک تیرے نام پر
    قلم کتنی بار ٹوٹتا ہے
    تمہیں کیا خبر

  3. #3
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default Re: Poet Club Comp May 2012

    Nice
    Last edited by *jamshed*; 03-05-2012 at 03:06 PM.

  4. #4
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    839 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1181
    Rep Power
    21474971

    Default Re: Poet Club Comp May 2012

    @jam786; yeh nazm ap ki apni tu likhi hue naih hia net per kafi jaga yeh hia...
    صرف آواز نہیں ، لفظ بھی مقفل ہیں مرے

    سوچ میں ہوں کہ اب تجھ کو پکاروں کیسے

  5. #5
    Join Date
    Mar 2010
    Location
    karachi
    Age
    28
    Posts
    997
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    45 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474844

    Default Re: Poet Club Comp May 2012


    Kahiin Logon ki Barbadi
    Kahiin Jazbon ki Ruswai
    Kahiin ho Khoon is Dil ka
    Kahiin Matam Kahiin Shadi
    Kisi ki Aankh main aanso
    Kisi k Dar pe hain Khushyan
    Koi hai Zaat main Tanha
    Koi Mehfil main hai Palta
    Koi ujrey huwe haalon main hai,
    Faryaad karta hai
    Kisi k paas har ek cheez hai,
    Aabad rehta hai

    Ye Dunya hai Yahan har cheez ka Imkaan rehta hai
    "Ae Mere Dil bata Tu kis liye Afsoos karta hai..?? "

    (NOSH)

    Last edited by Cute Ruba; 02-05-2012 at 10:15 AM.
    idamg0 - Poet Club Comp May 2012

  6. #6
    Join Date
    Mar 2011
    Location
    lOsT
    Posts
    9,771
    Mentioned
    346 Post(s)
    Tagged
    941 Thread(s)
    Thanked
    936
    Rep Power
    429513

    Default Re: Poet Club Comp May 2012

    khud likhni hai
    alone bedroom bird birdcage cage girl 5ff33852d7cce3f6d354f2987fba70c0 h large - Poet Club Comp May 2012

    ☆ ~*~ ☆Tanhayi Key Qilay Mien Qaid Ker Lya Khud Ko ☆ ~*~ ☆
    ☆ ~*~ ☆ Khush Na Sahi Mehfooz Hun Mien☆ ~*~ ☆
    ♡SR

  7. #7
    Join Date
    Sep 2011
    Location
    Jadoo Nagri
    Posts
    19,713
    Mentioned
    198 Post(s)
    Tagged
    8340 Thread(s)
    Thanked
    10
    Rep Power
    21474862

    Default Re: Poet Club Comp May 2012

    دل کانچ کا برتن تھا
    دل تھا نازک بہت
    ایک ٹھیس سے جب ٹوٹا
    تب رویا تھا بہت
    آواز نہ آئ جب ٹوٹ کے یہ بکھرا
    پر من کے آنگن میں گونجا شور بہت
    دل کی نگری بھی یہ کیسی نگری ہے
    کے ہر قدم پر، آنسو ہیں بہت
    ہم سے نہ پوچھو
    دل کیسے ٹوٹتا ہے
    یہ کہانی سناتے ہوئے
    اب ہم روئیں گے بہت





  8. #8
    Join Date
    Mar 2010
    Location
    ممہ کہ دل میں
    Posts
    40,298
    Mentioned
    32 Post(s)
    Tagged
    4710 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474884

    Default Re: Poet Club Comp May 2012


    دل
    عجب کھیل ہے دلوں کہ غم کہ آنچل میں درد کہ آنسو ہے
    ہجر کہ صحرا ء میں رنجشوں کی دھوپ ہے
    پیار میں وصل سے عذاب ہی عذاب ہےا
    پتھروں کہ دلوں میں نفرتوں کی وادی ہے
    محبت کہ اس سفر میں صرف بربادی ہے
    زیست کہ پہلو میں جفا کی آگ ہے
    کچھ خواب ادھوریں ہے تعبیروں کہ قابوس میں

    پیار کہ چراغ ہے دل کہ جزیروں میں
    عشق کی راہ میں دشمنوں کہ ذخیریں ہے
    کتنے مایوس آج ہے محبت کہ قبیلوں میں
    کہیں تپتی ریت پر عاشقوں کہ نام ہے
    تو کہیں ڈوبتی کشتی میں چاہنے والوں کہ انجام ہے
    فریب کا طوفان ہے موجوں کی تپش میں
    کئی عاشق مٹ گئے عشق کی خلش میں
    جیت میں بھی ہار ہے ہار میں بھی جیت ہے


    عجب کھیل ہے دلوں کہ
    نا کوئی منزل ہے ناکوئی راستہ ہے
    سلگتے ہے قدم پیار کی اس آگ میں
    غم کہ سیلاب ہے درد بے شمار ہے
    پھر بھی دل کی ڈھڑکنیں پیار کہ نام ہے
    پھر بھی محبت کو کرتے ہم سلام ہے
    عجب کھیل ہے دلوں کہ


    شاعرہ ریشم

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •