امریکا کا پاکستان پر ڈرون حملے جاری رکھنے کا اعلان

امریکی وزیردفاع لیون پنیٹا نے کہا ہے کہ پاکستان میں ڈرون حملے جاری رہیں گے۔ امریکا اپنے دفاع میں ہر قدم اٹھائے گا۔ اس سے پہلے شمالی وزیرستان میں امریکی حملے سے دس افراد جاں بحق ہو گئے۔ پاکستان نے حملے پر شدید احتجاج کیا ہے۔

واشنگٹن میں ایک ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے امریکی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ پاکستان میں شدت پسندوں کی پناہ گاہوں پر حملے بند نہیں کیے جائیں گے۔ لیون پنیٹا نے کہا کہ امریکا ہر حال میں اپنا دفاع کرے گا اور امریکی عوام کے تحفظ کے لیے کسی کارروائی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکا میں دوبارہ نائن الیون جیسے حملے نہیں ہونے دئیے جائیں گے اس سے پہلے شمالی وزیرستان کے علاقے شوال میں ہفتے کی صبح امریکی جاسوس طیاروں نے ایک مکان پر دو میزائل داغے جس سے دس افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہو گئے۔ پاکستان نے امریکی حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ ترجمان دفتر خارجہ معظم احمد خان کا کہنا ہے کہ پاکستانی سرزمین پر ڈرون حملہ ملکی خود مختاری پرحملہ ہے جو کسی صورت قابل قبول نہیں ہے۔