نئي دہلي. . . ..امريکي وزير خارجہ ہيلري کلنٹن نے بھارت سے مطالبہ کيا ہے کہ وہ ايران سے تيل کي درامد ميں کمي کے لئے اقدامات کرے. امريکي وزيرخارجہ نے نئي دہلي ميں وزيراعظم من موہن سنگھ سے ملاقات کے دوران کہا کہ بھارت کي جانب سے ايراني تيل پر انحصار کم کرنے کيلئے کئے گئے اقدامات حوصلہ افزا ہيں تاہم امريکا توقع کرتا ہے کہ بھارت ايران سے تيل کي درامد کم کرنے کے لئے مزيد اقدامات کرے گا تاکہ ايران کو ايٹمي پروگرام پراپني بين الاقوامي ذمہ دارياں پوري کرنے پر راغب کيا جا سکے. انہوں نے کہا کہ امريکا شايد آئندہ دو ماہ تک يہ فيصلہ نہ کرسکے کہ آيا بھارت کو ايراني سے تيل کي درامد پر مالياتي پابنديوں سے استثنا ديا جائے يا نہيں. بھارتي اخبار کے مطابق امريکي وزير خارجہ کے اس مطالبے پر بھارتي وزير اعظم کا کہنا تھا کہ ايران کو اپني بين الاقوامي ذمہ دارياں پوري کرني چاہئيں ليکن بھارت توانائي کي اپني ضروريات کو نظر انداز نہيں کرسکتا