اسلام آباد… سپريم کورٹ نے پارليمينٹيرينز کي مبينہ دوہري شہريت کيخلاف مقدمہ ميں سينيٹر رحمان ملک اور ايم اين اے فرح ناز اصفہاني کو دوبارہ نوٹس جاري کردئے ہيں. عدالت نے سينيٹ اور قومي اسمبلي کے سيکريٹريز سے بھي جواب طلب کرليا ہے. چيف جسٹس افتخارمحمد چودھري کي سربراہي ميں تين رکني بينچ نے بعض ارکان پارليمنٹ اور ممبران صوبائي اسمبلي پردوہري شہريت رکھنے کيخلاف دائر درخواست کي سماعت کي. دو پارليمينٹيرينز زاہد اقبال اور افتخار نذير کي طرف سے وکلاء پيش ہوئے جبکہ ڈپٹي اٹارني جنرل نے بتاياکہ رحمان ملک کا جواب آگيا ہے. عدالت اجازت دے تو وہ اسے پيش کرسکتے ہيں، عدالت نے انہيں ايسا کرنے سے روکتے ہوئے رحمان ملک اور فرح ناز اصفہاني کي طرف سے وکيل نہ آنے پر دوبارہ نوٹس جاري کرنے کا حکم ديا. مزيدسماعت دس مئي کوکي جائے گي