Results 1 to 3 of 3

Thread: لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا


    لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا
    جیسے کوئی وصل کی رات کا قصہ تھا

    بستی کے اس پار کہیں پر رات ڈھلے
    لمبی چیخ کے بعد کوئی سناٹا تھا

    جس کو اپنا گھر سمجھے تھے وہ تو محض
    دیواریں تھیں اور ان میں دروازہ تھا

    ہم نے اسے بھی لفظوں میں زنجیر کیا
    بادل جیسا جو آوارہ پھرتا تھا

    منزل کو سر کرنے والے لوگوں نے
    رستوں کا بھی ہر اندیشہ دیکھا تھا

    کیسے دن ہیں اس کا چہرہ دیکھ کے ہم
    سوچ رہے ہیں پہلے کہاں پہ دیکھا تھا





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  2. #2
    Join Date
    Jul 2010
    Location
    Karachi....
    Posts
    31,280
    Mentioned
    41 Post(s)
    Tagged
    6917 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474875

    Default Re: لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا

    aha bht Khoob


    Ik Muhabbat ko amar karna tha.....

    to ye socha k ..... ab bichar jaye..!!!!


  3. #3
    Join Date
    May 2010
    Location
    Karachi
    Age
    22
    Posts
    25,472
    Mentioned
    11 Post(s)
    Tagged
    6815 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    21474869

    Default Re: لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا

    khoo0b..
    tumblr na75iuW2tl1rkm3u0o1 500 - لفظ بھی کوئی اس کا ساتھ نہ دیتا تھا

    Hum kya hain

    Hmari Muhabatayn kya hain
    kya chahtay hain
    kya patay hain..

    -Umera Ahmad (Peer-e-Kamil)


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •