Results 1 to 2 of 2

Thread: ہمنشیں ! پوچھ نہ مجھ سے کہ محبت کیا ھے---احسان دانش

  1. #1
    Join Date
    Apr 2012
    Location
    duaon mein
    Posts
    126
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    8 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    6

    Default ہمنشیں ! پوچھ نہ مجھ سے کہ محبت کیا ھے---احسان دانش

    ہمنشیں ! پوچھ نہ مجھ سے کہ محبت کیا ھے
    اشک آنکھوں میں ابل آتے ھیں اس نام کے ساتھ

    تجھ کو تشریح محبت کا پڑا ھے دورہ
    پھر رہا ھے مرا سر گردش ایام کے ساتھ

    سن کہ نغموں میں ھے محلول یتیموں کی فغاں
    قہقہے گونج رھے ھیں یہاں کہرام کے ساتھ

    پرورش پاتی ھے دامان رفاقت میں ریا
    اہل عرفان کی بسر ھوتی ھے اصنام کے ساتھ

    کوہ و صحرا میں بہت خوار لیے پھرتی ھے
    کامیابی کی تمنا دل ناکام کے ساتھ

    یاس آئینہء امید میں نقاش عالم
    پختہ کاری کا تعلق ھوس خام کے ساتھ

    شب ھی کچھ نازکشِ پر تو خورشید نہیں
    سلسلہ صبح دل افروز کا ھے شام کے ساتھ

    ھے تونگر کے شبستاں میں چراغان بہشت
    وعدہء خلد بریں کشتہ آلام کے ساتھ


    احسان دانش


  2. #2
    Join Date
    Jul 2010
    Location
    Karachi....
    Posts
    31,280
    Mentioned
    41 Post(s)
    Tagged
    6917 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474875

    Default Re: ہمنشیں ! پوچھ نہ مجھ سے کہ محبت کیا ھے---احسان دانش

    Khooob


    Ik Muhabbat ko amar karna tha.....

    to ye socha k ..... ab bichar jaye..!!!!


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •