Results 1 to 2 of 2

Thread: ?کیا دین اسلام اب صرف فرقوں کی حد تک رہ گیا ہے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2012
    Location
    Bahawalpur
    Age
    25
    Posts
    58
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    62 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    0

    Default ?کیا دین اسلام اب صرف فرقوں کی حد تک رہ گیا ہے


    ?کیا دین اسلام اب صرف فرقوں کی حد تک رہ گیا ہے
    کیا آج کا اسلام وہی ہے جس سے ہمارے پیارے آقا حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم نے 14 سو سال پہلے ہمیں روشناس کروایا تھا اور اسکی تعلیمات کا عملی نمونہ خود اپنی شکل میں پیش کیا تھا !
    بڑا دکھہ ہوتا ہے کہ آج ہم مسلمان بس نام کے ہی رہ گئے ہیں ، ہم لوگ دوسرے مذاہب پر تبصرہ کرتے ہیں کہ انکا مذہب بدل دیا گیا ہے اور ان میں من گھڑت اور جھوٹی باتیں محض اپنے فائدے کے لئے شامل کر دی گئی ہیں
    ایمانداری سے دیکھا جائے تو آج ہم مسلمان بھی تو اسی راستے پر چل پڑے ہیں ، اب یہ اسلام دشمن عناصر کی سازش ہو یا ہماری اپنی کمزوریاں مگر آج اسلام کی اصل صورت اور تعلیمات کو مجروح کیا جا رہا ہے
    ہم نے ہر طرح کی بدعات کو اپنی زندگی کا حصہ بنا لیا ہے ، مطلب یہ کہ فرقہ اہم ہے اسلام نہیں !

    آپ میری اس بات سے ضرور اتفاق کریں گے کہ یہ تو الله پاک کا امت محمدی صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم پر خاص کرم ہے کہ اس نے اپنے پیارے رسول صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کے صدقے اسلام کی اصل روح اب بھی بیدار رکھی ہے اور قرآن پاک کی حفاظت کا ذمہ خود اٹھایا ہے ، کافروں کی بے پناہ کوششوں کے باوجودقرآن پاک کا اب تک اصل حالت میں موجود ہونا بہت بڑا معجزہ ہے ! ورنہ شائد اگر ہم پر ہوتی تو بائیبل اور دوسری مذہبی کتابوں کی طرح شائد آج قرآن پاک بھی بدل چکا ہوتا !

    قرآن پاک ایک مکمل ضابطہء حیات ہے جس پر چل کر انسان ایک کامیاب زندگی گزار سکتا ہے مگر ہم نے اس کو پڑھنے، سمجھنے اور اسکی تعلیمات کو اپنی زندگی میں لاگو کرنے کے بجائے غلافوں میں لپیٹ کر طاقوں میں رکھ دیا ہے ، یہ ہم زندہ لوگوں کی رہنمائی کے لئے بھیجا گیا مگر ہم نے روز مرہ زندگی میں استعمال کرنے کے بجاے صرف مردوں کے لئے ثواب بخشنے کا ذریعہ سمجھ لیا ہے !


    آج ہم مسلمان تو ہیں مگر بس نام کے !
    کہیں اور دیکھنے کی یا کسی اور پر تبصرہ کرنے کی ضرورت نہیں ہے بس اپنی طرف ہی دیکھیں تو اندازہ ہو گا کہ ہم نے اسلام کو پس پشت پھینک دیا ہے ، آج ہم اسلام پر نہیں فرقوں پر چلتے ہیں ، اور ہر فرقہ خود کو بر حق اور دوسرے کو کافر اور مشرک قرار دیتا ہے !

    فرقہ پرستی ہمارے دلوں اور ذہنوں میں اس حد تک گھر کر چکی ہے کہ اپنے عقیدے کی تقلید میں لوگ صرف اپنے عقیدے کو درست ثابت کرنے کے لئے مستند احادیث تک کو جعلی اور جھوٹ قرار دے دیتے ہیں جو کہ بذات خود ایک بہت بڑا گناہ بلکہ ایک کفریہ عمل ہے

    دوستو دین اسلام صرف قول کا نہیں عمل کا نام ہے !!!
    آپ کو نماز پڑھنے کی تلقین ہر مبلغ کرے گا مگر سچ بولنے اور اس پر عمل پیرا ہونے کی ہمت کوئی نہیں کرتا !


    عقائد کے بر عکس ہم زبانی کلامی توسچے مسلمان ہونے کے بڑے دعوے کرتے ہیں مگر جب بات عمل کی آ جاتی ہے تو چپ سادہ لیتے ہیں ، ایسا نہیں ہونا چاہئے کیونکہ اسی وجہ سے ہم دن بدن زوال پذیر ہیں ،

    جب تک ہمارا ایمان مضبوط تھا تب تک کسی اسلام دشمن میں یہ جرأت نہیں تھی کہ ہماری طرف ملی آنکھ سے بھی دیکھ سکے مگر اب ہمارے ایمان کی کمزوری نے ان اسلام دشمن قوتوں کو طاقتور بنا دیا ہے
    ہم سنی بھی ہیں شیعہ بھی ،اہل حدیث بھی ہیں دیو بندی اور وہابی بھی ہیں
    اگر کچھ نہیں ہیں تو ایک سچے مسلمان نہیں ہیں
    جس دن ہمارا یہ احساس جاگ گیا وہ دن قوت ایمانی کی فتح کا ہو گا !


    الله پاک سب مسلمانوں میں اتحاد ، اتفاق اور بھائی چارہ پیدا فرمائے اور
    ہمیں قول و فعل سے ایک سچا مسلمان اور نیک انسان بننے کی توفیق عطا فرمائے .
    آمین یارب العالمین صلی اللہ علیہ وسلما تسلیما کثیرا


    68430 281995821903444 1599593029 n - ?کیا دین اسلام اب صرف فرقوں کی حد تک رہ گیا ہے

  2. #2
    Join Date
    Apr 2012
    Location
    Karachi/Lahore Pakistan
    Posts
    12,439
    Mentioned
    34 Post(s)
    Tagged
    9180 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    249126

    Default Re: ?کیا دین اسلام اب صرف فرقوں کی حد تک رہ گیا ہے

    jazakALLAH khair ...

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •