Page 1 of 2 12 LastLast
Results 1 to 10 of 15

Thread: ایک سیاہ رات کی کہانی

  1. #1
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default ایک سیاہ رات کی کہانی

    ایک سیاہ رات کی کہانی

    وہ ایک سیاہ اندھیر ی رات تھی۔
    وہ سب دوست گاوں کے چوپال پر بیٹھے ہوئے تھے۔
    گپوں میں جنوں بھوتوں کا ذکر نکل آیا۔
    اسد کہنے لگا۔
    میرے دادا جی بتاتے تھے کہ گاوں سے باہر پانی والی بھن (تالاب نما جگہ جہاں بارش کا پانی اکٹھا ہو جائے) کے پاس جنوں کا ڈیرہ ہے ۔ وہ ایک رات کو بہت دیرسے وہاں سے گذرے تو وہاں ڈھول بجانے کی آوازیں آرہی تھی۔ شاید کسی جن کی شادی تھی۔ دادا بہت مشکل سے جان بچاکر آئےتھے۔
    شہباز بولا
    بکواس ۔ میں کئی مرتبہ وہاں گیا ۔ وہاں کچھ بھی نہیں ۔ یہ محض گھڑی ہوئی بات ہے-
    اسد بولا۔
    تم دن کے وقت جاتے ہو۔ دن کو سب ہی لوگ جاتے ہیں۔ جن تو وہاں رات کو ہوتے ہیں۔
    اکرم بھی نے ہاں میں ہاں ملائی
    شہباز ٹھیک کہتاہے۔ جن تو وہاں رات کو ہی ہو تے ہیں۔ دن کو وہ جگہ خالی کر دیتے ہیں ۔
    اسد اپنی بات پر اڑا رہا۔
    اتنے میں تنویر بولا۔
    یارو کیوں بحث کرتے ہو۔ یہ جن ون سب سنی سنائی باتیں ہیں۔ کیا آپ میں سے کسی کا جن سے سامنا ہوا ہے۔؟
    اس کا جواب تو نفی میں تھا- لیکن شہباز کب ہار ماننے والا تھا۔
    اگر ایسی بات ہے۔ تو پھر آپ لوگ ابھی وہاں بھن پر جائیں اور وہاں چکر لگا کر آئیں- تو میں آپ کی بات مان لوں گا۔
    اسد اور تنویر نے کہا-
    لو جی۔ یہ کونسی بڑی بات ہے۔ لیکن اگر ہم وہاں سے چکر لگا آجائیں تو تمھیں
    500 روپے دینا ہوں گے۔
    شہباز نے کہا
    ڈن۔۔۔۔
    لیکن اس بات کا یقین کیسے کیا جائےگا کہ آپ لوگ بھن پر گئے ہیں یا نہیں۔۔
    اکرام نے تجویز پیش کی
    اس کا بھی حل ہے۔ ہم ایک لکڑی کا ڈنڈا ان کو دیتے ہیں - یہ وہاں بھن کے شمال میں بیس قدم کے فاصلے یہ ڈنڈا زمین میں گاڑ کر آئیں گے۔ ہم صبح سویرے سب جاکر چیک کریںگے۔ اگر ڈنڈا گڑا ہوا پایا گیا تو اسد اور تنویر شرط جیت جائیں گے۔
    فیصلہ ہو گیا۔اسد اور تنویرکو لکڑی کا ایک ڈنڈا جس پر مخصوص نشانی لگی ہوئی تھی۔ دے دیا گیا۔ اوروہ اپنی مہم پر روانہ ہوگئے۔ انہوں نے کہا کہ وہ ایک گھنٹے میں واپس آجائیں گے۔
    لیکن ایک کے بجائے دوگھنٹے گذر گئے اسد اور تنویر واپس نہ آئے

    جاری ہے
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  2. #2
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی

    لیکن ایک کے بجائے دوگھنٹے گذر گئے اسد اور تنویر واپس نہ آئے
    شہباز پریشان ہو گیا۔
    یار یہ لوگ تو واپس نہیں آئے۔ کہیں جنوں کے ہتھے نہ چڑھ گئے ہوں۔
    اکرم کو بھی یقین تھا کہ بھن کے پاس جن ہیں۔
    وہ بھی خوفزدہ آواز میں بولا۔
    ہاں یا ر۔ پتہ نہیں ان کے ساتھ کیا ہو ا ہو گا۔۔
    پھر سوچ کر بولا۔
    ہم آدھا گھنٹہ اور انتظار کرتے ہیں پھرکچھ اور سوچتے ہیں۔

    آدھا گھنٹہ بھی گذر گیا ۔ مگراسد اور تنویر واپس نہ آئے۔
    اب تو اکرم اور شہباز ایک دوسرے پرالزام لگانے لگے۔
    یہ تم کہاتھا، نہیں یہ تم نے کہاتھا۔
    بہرحال بہت سی بحث کے بعد فیصلہ ہو ا کہ دونوں مل کر جاتے ہیں اور گاوں سے باہر تک اسد اور تنویر کو دیکتھے ہیں شاید وہ آرہے ہوں۔
    وہ گاوں سے ذرا باہر تک گئے تو خوف نے ان کے قدم روک دیے۔
    واپسی پر شہباز کا بڑا بھائی انہیں ڈھونڈتا ہوا مل گیا۔
    تم لوگ کہاں گئے تھے -
    اب شہباز نے ڈرتے ڈرتے ساری بات بتا دی۔
    شہباز کے بھائی نے کہا۔
    آپ لوگوں نے بہت برا کیا۔ پتہ نہیں وہ لوگ اب زندہ بھی ہوں گے یا نہیں- بہرحال میں ابو سے بات کرتاہوں۔
    تھوڑی دیر بعدپندرہ بیس بندوں کا قافلہ ہاتھوں میں لالٹینیں، لاٹھیاں، کلہاڑیاں وغیرہ اٹھانے گاوں سے باہر بھن کی طرف روانہ ہوگیا۔
    شہباز اور تنویر کے گھر کہرام مچا ہوا تھا۔ گاوں کی عورتیں اکٹھی تھیں اور مختلف تبصرے کررہی تھیں۔
    گاوں کے مسجد کے امام کو بلا لیا گیا تھا۔
    اور قرانی آیا ت کا ورد جاری تھا۔
    ادھر قافلہ جوں جوں بھن کے قریب پہنچ رہا تھا۔ لوگوں کے اندر بے چینی ، تجسس، اور ایک نامعلوم خوف بڑھتا جا رہا تھا۔

    جیسے وہ لوگ بھن کے پاس پہنچے ۔
    انہیں دور ہی سے دو افراد ساتھ ساتھ زمین پر گرے ہوئے نظر آئے۔
    وہ اسد اور تنویر ہی تھے۔ لیکن دونوں بے ہوش تھے۔
    لوگوں کی نظریں خوف سے ان کا طواف کر رہی تھیں-

    جاری ہے
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  3. #3
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی


    وہ اسد اور تنویر ہی تھے۔ لیکن دونوں بے ہوش تھے۔
    لوگوں کی نظریں خوف سے ان کا طواف کر رہی تھیں-

    شاید وہ آس پاس کہیں جن کی موجودگی کے آثار تلاش کررہے تھے۔
    کسی کی ہمت نہ ہورہی تھی کہ وہ لڑکوں کے پاس جائے۔
    اچانک چچا سلطان کا بیٹا کاشف جو چند دن پہلے ہی شہر سے آیا تھا۔ وہ آگے بڑھا اور ایک لڑکے کو سیدھا کیا۔ وہ تنویر تھا ۔ اس نے اسکی نبض چیک کی۔ دل پر ہاتھ رکھا۔ اور زور سے کہا۔
    یہ صرف بے ہوش ہے۔ اسے اٹھا لیں۔
    گاوں والے اپنے ساتھ ایک چارپا ئی بھی لائے تھے ۔ فورا ہی تنویر کو اٹھا کر چارپا ئی پر ڈال دیا گیا۔ لیکن سب بہت خوفزدہ سے انداز میں کام کر رہے تھے۔ کچھ لوگ کلمہ کا ورد کررہے تھے۔
    اب کاشف اسد کی طرف بڑھا۔
    وہ تھوڑا آگے تھا۔ اس کو سیدھا کیا اور اٹھانے کی کوشش کی۔

    لیکن کاشف کو ایسے لگا جیسے پیچھے سے کسی نے اسد کو پکڑا ہو ا ہو۔۔
    خوف کی ایک سرد لہر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔کاشف کے جسم سے سرسراتی ہوئی گذری۔۔
    گرچہ لالٹینوں کی روشنی تھی مگروہ لوگ پیچھے ذرا فاصلے پر تھے۔ ویسے بھی روشنی صرف ایک رخ یعنی سامنے سے تھی۔
    پیچھے کی طرف تو کچھ بھی نظرنہیں آتا تھا۔
    کاشف پہلی مرتبہ خوف زدہ ہوا۔
    لیکن ہمت کرکے اس نے اسد کو پھر اٹھانے کی کوشش کی ۔۔۔
    اسے پھر ایسے لگا جیسے کسی نے اسد کو پیچھے سے پکڑ رکھا ہو۔۔
    وہ اپنی خوف کی کیفیت کا اظہار نہیں کر نا چاہتا تھا۔
    اسے پتہ تھا۔
    یہ دیہاتی لوگ توہم پر ست ہیں۔۔
    یہ اور بھی خوف زدہ ہو جائیں گے۔۔
    اس کا ذہن بہت تیزی سے سوچ رہا تھا۔۔۔
    اسکے ماتھے پر پسینے کے قطرے ابھر آئے۔۔۔

    جاری ہے
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  4. #4
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی


    اس کا ذہن بہت تیزی سے سوچ رہا تھا۔۔۔
    اسکے ماتھے پر پسینے کے قطرے ابھر آئے۔۔۔

    اس نے ایک بند ے کو لالٹین قریب لانے کو کہا۔۔
    پھر لالٹین اسکے کے ہاتھ سے لے کر اسد کے پیچھے لے گیا۔۔۔
    چند لمحے بعدہی وہ سب معمہ حل ہو گیا ۔۔
    اوہ۔۔۔
    تو یہ بات ہے۔۔

    آدھے گھنٹہ بعد وہ سب اسد کے گھر میں بیٹھے ہو ئے ۔۔ تھے۔
    اسد اور تنویر کو ہوش آگیا تھا۔ ۔۔
    پہلے تو وہ بہت خوف زدہ تھے۔ بلکہ جب اسد کو ہوش آیا تو اس نے با قاعدہ دوڑنے کی کوشش کی۔۔
    اور چیخنے لگا۔۔ جن نے مجھے پکڑ لیا ہے۔۔۔جن نے مجھے پکڑ لیا ہے۔۔۔
    مولوی صاحب نے سورہ یٰسین پڑھ کر دم کی۔۔۔لوگوں نے حوصلہ دیا۔۔
    اسکی ماں آب زم زم لے آئی۔۔
    اور کچھ دیر بعد وہ پرسکون ہوا۔۔۔
    رات تو تقریبا گذر ہی چکی تھی۔۔۔
    اسد کے باپ نے اپنے گھر میں سب افراد کو
    چائے پلائی ۔۔۔
    موسم اتنا سردتو نہیں تھا۔ ۔
    مگر رات نے خنکی بڑھا دی تھی
    چائے کا دور ختم ہو نے کے باوجود
    لوگ اسد کے پاس موجود تھے۔۔۔
    سبھی کو تجسس تھا۔۔
    اسد اور تنویر کے ساتھ ہوا کیا تھا۔۔۔
    وہ کیسے بے ہوش ہوئے۔۔
    کیا انہوں نے جن دیکھے۔۔
    یہ اور اس ملتے جلتے سوالوں نے سب لوگوں کو وہاں روک رکھا ۔۔
    یہ اس چھوٹے سے دیہات کی
    بریکنگ نیوز تھی۔۔ بلکہ بریکنگ سٹوری تھی۔۔۔
    جو شاید اگلے کئی ہفتے زیربحث آنی تھی۔۔
    اس سٹوری کے اصل کردار ان کے سامنے تھے۔
    وہ ان کے منہ سے ۔۔۔۔
    سنسی خیزانکشافات سننے کے انتظار میں تھے۔۔
    جاری ہے
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  5. #5
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی


    اس سٹوری کے اصل کردار ان کے سامنے تھے۔
    وہ ان کے منہ سے ۔۔۔۔
    سنسی خیزانکشافات سننے کے انتظار میں تھے۔۔

    بالاخر مولوی صاحب بولے۔۔
    فجر کی نماز میں تھوڑا سا وقت ہے۔۔
    یہ سب لوگ۔۔
    اسد اور تنویر کے منہ سے واقعات کی تفصیل سننا چاہتے ہیں۔۔
    اگر اسد بیٹا اب بہتر محسوس کررہا ہے تو
    ساری بات بتائے تاکہ لوگ گھر جائیں اور نماز کی تیاری کریں
    اسد سے پہلے تنویر بولا
    جی مولوی صاحب
    میں بتاتاہوں۔۔
    ہم لوگ جب اکرم اور شہباز کو بتا کر نکلے تو ہمارے ذہن خوف سے خالی تھے۔
    ہم بہت پر اعتماد انداز سے بھن پر پہنچ گئے۔۔۔
    وہاں پہنچے تو ایک ہولناک۔۔خاموشی کا سحر
    ہرسو طاری تھا۔۔
    بھن کے ساتھ ہی واقع پہاڑی بہت بڑی ،
    اپنے حجم سے بہت بڑی لگ رہی تھی۔۔
    پھر ہوا چلنے لگی۔۔
    سرسراتی ہوا۔۔
    پھراچانک ہمیں ایسا لگا ۔۔۔
    جیسے کچھ آوازیں آ رہی ہوں۔۔۔۔
    جیسے کوئی بول رہا ہو-۔۔
    پتہ نہیں کیوں ہمیں کچھ کچھ خوف محسوس ہوا۔۔
    لیکن اسد نے بھن سے بیس قدم گن کر ڈنڈے کو زمین میں ایک پتھر لے کر دبا نا شروع کیا ۔۔۔
    میں بھی اسد کے پاس ہی تھا۔۔
    ہر سوگھپ اندھیرا۔۔۔
    ہوا چل رہی تھی۔۔ اور
    پتہ نہیں کیوں ایسے لگ رہا تھا۔۔ جیسے کوئی بول رہا ہے۔۔
    کچھ کہ رہا ہے۔۔
    میں نےاسد کو کہا ۔۔۔
    جلدی کرو ۔۔ مجھے خوف محسو س ہو رہا ہے۔۔
    اسد بولا۔۔۔
    ہاں یا ر ۔۔۔ کچھ ایسا ہی مجھے بھی لگ رہا ہے۔۔۔
    میں ڈنڈے کو زمیں میں گاڑ رہاہوں ۔۔۔ لیکن بہت مشکل ہورہی ہے۔
    کچھ نظرہی نہیں آ رہا۔۔
    میں نے کہا
    زور زور سے پتھر کو ڈنڈے کے سر پر مارو۔۔۔
    پھراسد نے ایسے ہی کیا۔۔
    اور بولا
    چلواب بھاگو یہاں سے
    جیسے ہی میں نےقدم اٹھایا۔۔
    اسد چیخا۔۔
    تنویر۔۔۔ تنویر۔۔
    مجھے کسی نے پیچھے سے پکڑ لیا ہے۔۔
    مجھے جن نے پکڑ لیا ہے۔۔
    مجھے۔۔۔مجھ۔۔۔
    اور پھروہ خاموش ہوگیا۔۔
    مجھے ایسے لگا۔۔
    میرے پاوں کسی نے زمین سے باندھ دیے ہوں۔۔
    اور پھر ۔۔
    شاید میں بھی خوف سے بے ہو ش ہوگیا۔۔۔
    جاری ہے
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  6. #6
    Join Date
    Jan 2013
    Location
    Islamabad
    Posts
    1,031
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    4328 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    251262

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی


    مجھے ایسے لگا۔۔
    میرے پاوں کسی نے زمین سے باندھ دیے ہوں۔۔
    اور پھر ۔۔
    شاید میں بھی خوف سے بے ہو ش ہوگیا۔۔۔

    اب آگے کی کہانی بلکہ اصل کہانی میں سناتا ہوں۔۔۔
    اچانک چچا سلطان کا بیٹا کاشف بولا۔۔۔
    تم۔۔۔
    تنویر، اسد کے ساتھ تقریبا سب ہی لوگ چونک کر بولے۔۔۔
    مگر تم تو ہمارے ساتھ ہی وہاں گئے تھے۔۔

    جی ہاں ۔۔۔۔
    میں آپ لوگوں کے ساتھ ہی گیا تھا۔۔۔
    اور ایک لمحے کو تو ۔۔۔۔ سچی بات ہے۔۔۔ میں بھی بہت ڈر گیا تھا۔۔۔
    مگرپھر اللہ نے مجھے ہمت دی۔۔۔
    اور میں بات کی تہ تک پہنچ گیا۔۔۔
    کاشف نے بہت پرسکون انداز میں جواب دیا۔۔
    اب لوگ کاشف کی طرف متوجہ ہوگئے۔۔۔
    سب کی آنکھیں ۔۔
    تجسس سے جیسے پھٹ رہی تھیں۔۔۔
    --
    کاشف دھیما سا مسکرایا۔۔۔ اور کہا۔۔
    آپ سب لوگوں کے سامنے میں پہلے تنویر کو جو کہ اسد سے چند قدم پہلے گرا ہوا تھا۔۔ چیک کیا ۔۔ اور آپ لوگوں کو اٹھا نے کا کہا۔۔
    پھر
    جب میں نےاسد کو اٹھانے کی کوشش کی تو مجھے ایسے لگا
    جیسے اسے پیچھے سے کسی نے پکڑا ہوا ہو۔۔
    میں لالٹین منگوائی اور جب دیکھا۔۔
    تو
    اسد کی قمیص ڈنڈے کے ساتھ ہی زمیں میں گڑی ہوئی ۔۔
    دراصل اندھیرے میں اسے پتہ نہ چلا۔۔ہوگا۔۔
    یوں جب اس نے اٹھنے کی کوشش کی تو اسے لگا کہ
    اسے کسی نے پکڑ لیا۔۔۔
    حالانکہ ایسی کوئی بات نہ تھی۔۔
    یہ ذہن میں جاگزیں خوف تھا ۔۔۔
    جس نے انہیں بے ہوش کردیا۔۔۔۔
    سب حیرت سے منہ پھاڑے کاشف کو دیکھے جارہے تھے۔۔۔
    ختم شد

    تحریر: ایم ۔ نور

    جی جناب تو کیسی لگی آپ کو یہ کہانی ۔ اپنی رائے سے ضرور نوازیے گا۔ شکریہ
    آنسو اور مسکرا ہٹ دو انمول خزانے ہیں-پہلے خزانے کواپنے تک محدود رکھواور دوسرے کولوگوں پر نچھاور کردو.حضرت علی
    Visit my blog
    http://www.homeopathypakistan.blogspot.com

    MY PAGE ON FB
    www.facebook.comhomeo

  7. #7
    Join Date
    Apr 2012
    Location
    Karachi/Lahore Pakistan
    Posts
    12,439
    Mentioned
    34 Post(s)
    Tagged
    9180 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    249126

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی

    nice

  8. #8
    Join Date
    Sep 2010
    Location
    Mystic falls
    Age
    29
    Posts
    52,044
    Mentioned
    326 Post(s)
    Tagged
    10829 Thread(s)
    Thanked
    5
    Rep Power
    21474896

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی

    wah acha likha hai iska matlab hai jin ka khof unk dimagh main pehlay se hi tha

    eq2hdk - ایک سیاہ رات کی کہانی

  9. #9
    Join Date
    Dec 2010
    Location
    Jinzhou, Liaoning, China, Madinah Saudi Arabia
    Posts
    12,264
    Mentioned
    82 Post(s)
    Tagged
    7842 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    895521

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی

    kahani mazay ki hai
    images?qtbnANd9GcSD7qCu5RmanJAqGaixYtC w47jXo28t NBgcZ q5Z33lher5Bl - ایک سیاہ رات کی کہانی

    Rehney Dey Is Dard Mein Zindaa
    Main Tanhaa Hee Sahee . . .

  10. #10
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default Re: ایک سیاہ رات کی کہانی

    bohat zabardast

Page 1 of 2 12 LastLast

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •