Results 1 to 4 of 4

Thread: سرکاردوعالم کی نسبت

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default سرکاردوعالم کی نسبت




    سرکاردوعالم کی نسبت
    __________________
    حضرت جنید بغدادی ؒ اپنے وقت کے شاہی پہلوان تھے۔

    ایک دن جنید پہلوان بادشاہ کے دربار میں اراکین سلطنت کے ہمراہ بیٹھا ہوا تھا کہ شاہی محل کے صدر دروازے پر کسی نے دستک دی۔ خادم نے آکر بادشاہ کو بتایا کہ ایک کمزور و ناتواں شخص دروازے پر کھڑا ہے جس کا بوسیدہ لباس ہے۔ کمزوری کا یہ عالم ہے کہ زمین پر کھڑا ہونا مشکل ہو رہا ہے۔ اس نے یہ پیغام بھیجا ہے کہ جنید کو میرا پیغام پہنچا دو کہ وہ کشتی میں میرا چیلنج قبول کرے

    اجنبی ڈگمگاتے پیروں سے دربار میں حاضر ہوا۔ بادشاہ نے اجنبی سے پوچھا تم کیا چاہتے ہو۔ اجنبی نے جواب دیا میں جنید پہلوان سے کشتی لڑنا چاہتا ہوں

    بادشاہ نے مقابلے کے لیے دن متعین کردیا

    بادشاہ بھی کشتی دیکھنے کے لیے آیا۔ جب دونوں نے پنجہ آزمائی شروع کی تو وہ کم زور ناتواں شخص کہنے لگا: اے جنید ! میں کوئی پہلوان نہیں ہوں۔ زمانے کا ستایا ہوا ہوں۔ میں آل رسول صلی اللہ علیہ وسلم ہوں۔ سید گھرانے سے میرا تعلق ہے میرا ایک چھوٹا سا کنبہ کئی ہفتوں سے فاقوں میں مبتلا جنگل میں پڑا ہوا ہے۔ چھوٹے چھوٹے بچے شدت بھوک سے بے جان ہو چکے ہیں۔ خاندانی غیرت کسی سے دست سوال نہیں کرنے دیتی۔ سید زادیوں کے جسم پر کپڑے پھٹے ہوئے ہیں۔ بڑی مشکل سے یہاں تک پہنچا ہوں۔ میں نے اس امید پر تمہیں کشتی کا چیلنج دیا ہے کہ تمہیں حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے گھرانے سے عقیدت ہے۔ آج خاندان نبوت کی لاج رکھ لیجئے۔ میں وعدہ کرتا ہوں کہ آج اگر تم نے میری لاج رکھی تو کل میدان محشر میں اپنے نانا جان سے عرض کرکے فتح و کامرانی کا تاج تمہارے سر پر رکھواؤں گا

    اس کے بعد کشتی لڑنا شروع کردی۔حضرت جنید بغدادیؒ اگر چاہتے تو بائیں ہاتھ سے اِسے نیچے پٹخ سکتے تھے، مگر اس شخص نے نبی کریم ؐ کی قرابت کا واسطہ دیاتھا۔ یہ سرکاردوعالمؐ کی نسبت تھی، جس سے جنید کا دل پسیج گیا۔انہوں نے دل سے فیصلہ کیا کہ جنید! اس وقت اپنی عزت کا خیال ترک کردے، تجھے محبوب ِ خداؐ کے ہاں عزت مل جائے گی۔ یہی تیرے لیے بہترین سرمایہ ہے۔ چناں چہ تھوڑی دیر پنجہ آزمائی کی اور اس کے بعد جنید خود ہی چت ہوگئے اور وہ کم زور اُن کے سینے پر بیٹھ گیا اور کہنے لگا کہ میں نے انہیں گرادیا۔

    بادشاہ بہت ناراض ہوا۔ اس نے جنید کو بہت زیادہ لعن طعن کیا، یہاں تک کہ اس نے کہا :’’ جی چاہتا ہے کہ تمہیں بے عزت کرکے پورے شہر میں پھرائوں، تم اتنے کم زور آدمی سے ہار گئے۔‘‘ جنید بغدادی ؒ نے وقتی ذلّت برداشت کرلی۔ گھر آکر بتایا تو بیوی بھی پریشان ہوئی اور باقی اہل خانہ بھی پریشان ہوئے کہ تم نے اپنی عزت آج خاک میں ملادی،

    مگر جنید کا دل مطمئن تھا، چناچہ اس قربانی کی بدولت جنید بغدادی ؒ بڑے اولیاء اﷲ میں شمار ہوئے اور اﷲ تعالیٰ نے اُن سے دین کا کام خوب لیا۔

    کتاب زلف و انجیر صفحہ 72۔ 62

  2. #2
    Join Date
    Sep 2011
    Location
    Jadoo Nagri
    Posts
    19,713
    Mentioned
    198 Post(s)
    Tagged
    8340 Thread(s)
    Thanked
    10
    Rep Power
    21474862

    Default Re: سرکاردوعالم کی نسبت

    Subhan Allah

    Jazak Allah

  3. #3
    Join Date
    Jul 2010
    Location
    Karachi....
    Posts
    31,280
    Mentioned
    41 Post(s)
    Tagged
    6917 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474875

    Default Re: سرکاردوعالم کی نسبت

    wah Subhan ALLAH

  4. #4
    Join Date
    Apr 2012
    Location
    Karachi/Lahore Pakistan
    Posts
    12,439
    Mentioned
    34 Post(s)
    Tagged
    9180 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    249126

    Default Re: سرکاردوعالم کی نسبت

    Subhan Allah

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •