Results 1 to 2 of 2

Thread: تُو میرے پاس نہ تھی پھر بھی سحر ہونے تک

  1. #1
    Join Date
    Nov 2008
    Location
    اسلامی جمہوریہ پاکستان
    Posts
    3,460
    Mentioned
    273 Post(s)
    Tagged
    8176 Thread(s)
    Thanked
    90
    Rep Power
    1073759

    snow تُو میرے پاس نہ تھی پھر بھی سحر ہونے تک

    [size=3 div id=]
    تُو میرے پاس نہ تھی پھر بھی سحر ہونے تک
    تیرا ہر سانس میرے جسم کو چُھو کر گزرا
    قطرہ قطرہ تیرے دیدار کی شبنم ٹپکی
    لمحہ لمحہ تیری خوشبو سے معطّر گزرا

    اب یہی ہے تجھے منظور تو اے جانِ قرار
    میں تیری راہ نہ دیکھوں* گا سیاہ راتوں میں
    ڈھونڈ لیں گی میری ترسی ہوئی نظریں تجھ کو
    نغمہ و شعر کی اُمڈی ہوئی برساتوں میں

    اب تیرا پیار ستائے گا تو میری ہستی
    تیری مستی بھری آواز میں ڈھل جائے گی
    اور یہ روح جو تیرے لئے بے چین سی ہے
    گیت بن کے تیرے ہونٹوں پہ مچل جائے گی

    تیرے نغمات تیرے حسن کی ٹھنڈک لے کر
    میرے تپتے ہوئے ماحول میں آ جائیں گے
    چند گھنٹوں* کے لئے ہو کے ہمیشہ کے لئے
    میری جاگی ہوئی راتوں کو سُلا جائیں گے
    __________________
    [/size]
    2v1u8md - تُو میرے پاس نہ تھی پھر بھی سحر ہونے تک

  2. #2
    Join Date
    Jul 2010
    Location
    Karachi....
    Posts
    31,280
    Mentioned
    41 Post(s)
    Tagged
    6917 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474875

    Default Re: تُو میرے پاس نہ تھی پھر بھی سحر ہونے تک

    Khoob..


    Ik Muhabbat ko amar karna tha.....

    to ye socha k ..... ab bichar jaye..!!!!


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •