Results 1 to 5 of 5

Thread: انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

  1. #1
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

    انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی​

    سو جائیں گے اک روز زمیں اوڑھ کے ہم بھی​

    بے جا نہیں کہہ دوں جو اسے لطف و کرم بھی​
    قسمت میں مری اتنے کہاں تھے ترے غم بھی​

    جس لغزش آدم سے خلافت ہے مزین​
    اس جوش محبت کے خطاوار ہیں ہم بھی​

    اہلوں کے مقامات پہ نا اہل ہیں فائز​
    گھٹتا ہے اب اس شہر تمدن میں تو دم بھی​

    آ جائے میسر جو کوئی ڈھب کا خریدار​
    ہم لوگ تو بک جاتے ہیں بے دام و درم بھی​

    یہ بات غلط شہر میں "تم سے ہیں ہزاروں"​
    اے جان طرب آج تو نایاب ہیں ہم بھی​

    پہلے تو اعزا مرے رونے پہ ہنسے ہیں​
    دنیا پہ گزرتا ہے گراں اب ترا غم بھی​

    انسان کی کیا بات ہے؟ پتھر کی سلوں پر​
    محفوظ ابھی تک ہیں کئی نقش قدم بھی​

    لازم ہے کہ شایان تجلی ہوں نگاہیں​
    ہونے کو تو یوں طالب دیدار ہیں ہم بھی​

    اس شہر میں چلتی نہیں اخلاق کی راہیں​
    اس دور میں ناپید ہیں ارباب ہمم بھی​

    ڈر ہے کہیں اس کو بھی نہ اپنا لے زمانہ​
    محدود ابھی تو ہے ہمیں تک ترا غم بھی​

    حیرت ہے کہ رکتے ہیں جہاں زیست کے رہرو​
    کہتے ہیں اسی قریہ ہستی کو عدم بھی​

    شام آئی سمندر میں چلا ڈوبنے سورج​
    اک روز ترے دل سے اتر جائیں گے ہم بھی​

    دیوانے اگر جھانجھ میں کہہ دیں گے کوئی بات​
    رہ جائیں گے منہ دیکھ کے قرطاس و قلم بھی​

    تو نے کبھی اس راز کو سوچا ہے نہ سمجھا​
    ہیں تیرے تعاقب میں ترے نقش قدم بھی​

    ہر چند کہ شکوہ ہے غم ہجر کا لیکن​
    جینے میں معاون ہے ترے ہجر کا غم بھی​

    تاریک شبوں میں بھی کئی غار تھے روشن​
    اے کاش وہ خوش کام سماں دیکھتے ہم بھی​

    میں مسند و اورنگ سے غافل تو نہیں ہوں​
    ہے میری نظر میں ترا معیار کرم بھی​

    لبریز کیا ہے تو سنبھالو ہمیں ورنہ​
    شیشے کی طرح گر کے بکھر جائیں گے ہم بھی​

    تشخیص مرض چارہ گرو سوچ سمجھ کر!​
    ہوتا ہے مجھے درد کی تخفیف کا غم بھی​

    تم لوگ زباں دے کے بھی پھر جاتے ہو اکثر​
    ہم لوگ نبھا دیتے ہیں بے قول و قسم بھی​

    کل رات سے سینہ میں وہی پہلی خلش ہے​
    اب ہاتھ سے جاتا نظر آتا ہے بھرم بھی​

    جو سینہ سپر عرصہ ہستی میں ہیں دانش​
    دشوار نہیں ان کے لیے راہ عدم بھی​

  2. #2
    Join Date
    Jan 2011
    Location
    pakistan
    Posts
    9,092
    Mentioned
    95 Post(s)
    Tagged
    8378 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    429513

    Default Re: انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

    nice


  3. #3
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,928
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    24
    Rep Power
    21474855

    Default

    zabardast


  4. #4
    °Têhrêêr°'s Avatar
    °Têhrêêr° is offline .·★ ƒяɨ€ɲď ๏ƒ ɲąţµя€ ★.·´
    Join Date
    May 2014
    Location
    ●♥forest♥●
    Age
    24
    Posts
    3,439
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    1546 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    7

    Default

    Nice 1
    I aM sTrOnG bEaCaUsE I DePeNdS oN AllAh

  5. #5
    Join Date
    Aug 2012
    Location
    Baazeecha E Atfaal
    Posts
    12,045
    Mentioned
    303 Post(s)
    Tagged
    208 Thread(s)
    Thanked
    219
    Rep Power
    18

    Default

    Vaah :-) Bohat Khoob :-)
    (-: Bol Kay Lab Aazaad Hai'n Teray :-)


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •