Results 1 to 5 of 5

Thread: انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

  1. #1
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    38
    Rep Power
    21474858

    Default انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

    انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی​

    سو جائیں گے اک روز زمیں اوڑھ کے ہم بھی​

    بے جا نہیں کہہ دوں جو اسے لطف و کرم بھی​
    قسمت میں مری اتنے کہاں تھے ترے غم بھی​

    جس لغزش آدم سے خلافت ہے مزین​
    اس جوش محبت کے خطاوار ہیں ہم بھی​

    اہلوں کے مقامات پہ نا اہل ہیں فائز​
    گھٹتا ہے اب اس شہر تمدن میں تو دم بھی​

    آ جائے میسر جو کوئی ڈھب کا خریدار​
    ہم لوگ تو بک جاتے ہیں بے دام و درم بھی​

    یہ بات غلط شہر میں "تم سے ہیں ہزاروں"​
    اے جان طرب آج تو نایاب ہیں ہم بھی​

    پہلے تو اعزا مرے رونے پہ ہنسے ہیں​
    دنیا پہ گزرتا ہے گراں اب ترا غم بھی​

    انسان کی کیا بات ہے؟ پتھر کی سلوں پر​
    محفوظ ابھی تک ہیں کئی نقش قدم بھی​

    لازم ہے کہ شایان تجلی ہوں نگاہیں​
    ہونے کو تو یوں طالب دیدار ہیں ہم بھی​

    اس شہر میں چلتی نہیں اخلاق کی راہیں​
    اس دور میں ناپید ہیں ارباب ہمم بھی​

    ڈر ہے کہیں اس کو بھی نہ اپنا لے زمانہ​
    محدود ابھی تو ہے ہمیں تک ترا غم بھی​

    حیرت ہے کہ رکتے ہیں جہاں زیست کے رہرو​
    کہتے ہیں اسی قریہ ہستی کو عدم بھی​

    شام آئی سمندر میں چلا ڈوبنے سورج​
    اک روز ترے دل سے اتر جائیں گے ہم بھی​

    دیوانے اگر جھانجھ میں کہہ دیں گے کوئی بات​
    رہ جائیں گے منہ دیکھ کے قرطاس و قلم بھی​

    تو نے کبھی اس راز کو سوچا ہے نہ سمجھا​
    ہیں تیرے تعاقب میں ترے نقش قدم بھی​

    ہر چند کہ شکوہ ہے غم ہجر کا لیکن​
    جینے میں معاون ہے ترے ہجر کا غم بھی​

    تاریک شبوں میں بھی کئی غار تھے روشن​
    اے کاش وہ خوش کام سماں دیکھتے ہم بھی​

    میں مسند و اورنگ سے غافل تو نہیں ہوں​
    ہے میری نظر میں ترا معیار کرم بھی​

    لبریز کیا ہے تو سنبھالو ہمیں ورنہ​
    شیشے کی طرح گر کے بکھر جائیں گے ہم بھی​

    تشخیص مرض چارہ گرو سوچ سمجھ کر!​
    ہوتا ہے مجھے درد کی تخفیف کا غم بھی​

    تم لوگ زباں دے کے بھی پھر جاتے ہو اکثر​
    ہم لوگ نبھا دیتے ہیں بے قول و قسم بھی​

    کل رات سے سینہ میں وہی پہلی خلش ہے​
    اب ہاتھ سے جاتا نظر آتا ہے بھرم بھی​

    جو سینہ سپر عرصہ ہستی میں ہیں دانش​
    دشوار نہیں ان کے لیے راہ عدم بھی​

  2. #2
    Join Date
    Jan 2011
    Location
    pakistan
    Posts
    9,092
    Mentioned
    95 Post(s)
    Tagged
    8378 Thread(s)
    Thanked
    3
    Rep Power
    429514

    Default Re: انساں نہیں رہتا ہے تو ہوتا نہیں غم بھی

    nice


  3. #3
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,930
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    25
    Rep Power
    21474856

    Default

    zabardast


  4. #4
    °Têhrêêr°'s Avatar
    °Têhrêêr° is offline .·★ ƒяɨ€ɲď ๏ƒ ɲąţµя€ ★.·´
    Join Date
    May 2014
    Location
    ●♥forest♥●
    Age
    25
    Posts
    3,439
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    1546 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    8

    Default

    Nice 1
    I aM sTrOnG bEaCaUsE I DePeNdS oN AllAh

  5. #5
    Join Date
    Aug 2012
    Location
    Baazeecha E Atfaal
    Posts
    12,586
    Mentioned
    332 Post(s)
    Tagged
    210 Thread(s)
    Thanked
    261
    Rep Power
    18

    Default

    Vaah :-) Bohat Khoob :-)
    (-: Bol Kay Lab Aazaad Hai'n Teray :-)


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •