Results 1 to 2 of 2

Thread: زندگی سے یہی گلہ ہے مجھے

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default زندگی سے یہی گلہ ہے مجھے


    اسلام علیکم
    ہماری اردو شاعری میں زندگی سے گلہ شکوہ بہت زیادہ ملتا ہے،کسی شاعر نے کہا ہے کہ زندگی نام ہے مر مر کے جیے جانے کا،تو کسی نے زندگی کو جبر مسلسل کا نام دیا ہے،اسی طرح ایک شاعر تو تو زندگانی چار دن کی قرار دیتا ہے،جس میں سے دو دن آرزوں میں کٹ جاتے ہیں اور باقی کے دہ انتظار میں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    اسی پس منظر میں ایک شعر آج نگاہ سے گزرا ہے۔

    زندگی سے یہی گلہ ہے مجھے
    تُو بڑی دیر سے ملا ہے مجھے


    کیا آپ کو بھی زندگی سے کوئی گلہ ہے ؟؟ کسی کے دیر سے ملنے کا گلا ہے یا پھر کوئی اور گلہ ہے،اور اگر گلہ نہیں ہے تو کیوں نہیں ہے؟؟؟؟؟؟؟؟؟؟؟؟؟






    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  2. #2
    Join Date
    Jul 2011
    Location
    Karachi Pakistan
    Posts
    13,592
    Mentioned
    62 Post(s)
    Tagged
    7109 Thread(s)
    Thanked
    1
    Rep Power
    21474856

    Default Re: زندگی سے یہی گلہ ہے مجھے

    han,,gile to insan ki fitrat hai shamil hain na,,,muje b zindagi se bohat se gile hain,,,wo song hai na kese kese ko diya hai aese wesen ko dia hai mujko b to lift karade,,,,,bohat kuch mila b hai but jo chiye wo nai mill raha,,

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •