Results 1 to 3 of 3

Thread: دائم پڑا ہُوا ترے در پر نہیں ہُوں میں

  1. #1
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default دائم پڑا ہُوا ترے در پر نہیں ہُوں میں


    دائم پڑا ہُوا ترے در پر نہیں ہُوں میں
    خاک ایسی زندگی پہ کہ پتھر نہیں ہُوں میں

    کیوں گردشِ مدام سے گبھرا نہ جائے دل
    انسان ہوں پیالہ و ساغر نہیں ہُوں میں

    یا رب، زمانہ مجھ کو مٹاتا ہے کس لیے؟
    لوحِ جہاں پہ حرفِ مکرّر نہیں ہُوں میں

    حد چاہیے سزا میں عقوبت کے واسطے
    آخر گناہگار ہُوں کافَر نہیں ہُوں میں

    کس واسطے عزیز نہیں جانتے مجھے؟
    لعل و زمرّد و زر و گوھر نہیں ہُوں میں

    رکھتے ہو تم قدم مری آنکھوں سے کیوں دریغ؟
    رتبے میں مہر و ماہ سے کمتر نہیں ہُوں میں

    کرتے ہو مجھ کو منعِ قدم بوس کس لیے؟
    کیا آسمان کے بھی برابر نہیں ہُوں میں؟

    غالب وظیفہ خوار ہو دو شاہ کو دعا
    وہ دن گئے کہ کہتے تھے نوکر نہیں ہُوں میں

    کہاں اتنی سزائیں تھیں بھلا اس زندگانی میں
    ہزاروں گھر ہوئے روشن جو میرا دل جلا محسنؔ


  2. #2
    Join Date
    Jan 2011
    Location
    pakistan
    Posts
    9,092
    Mentioned
    95 Post(s)
    Tagged
    8378 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    429513

    Default Re: دائم پڑا ہُوا ترے در پر نہیں ہُوں میں

    nice


  3. #3
    Join Date
    Aug 2012
    Location
    Baazeecha E Atfaal
    Posts
    12,042
    Mentioned
    303 Post(s)
    Tagged
    207 Thread(s)
    Thanked
    219
    Rep Power
    18

    Default

    Vaah Bohat Khhoob :-)
    Zabardast, Nice Sharing .....
    Khush Rahai'n, Aabaad Rahai'n ;-)
    (-: Bol Kay Lab Aazaad Hai'n Teray :-)


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •