Results 1 to 3 of 3

Thread: حالات شہر سے متاثر ہو کر

  1. #1
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default حالات شہر سے متاثر ہو کر


    میں نے کہا کہ شہر کے حق میں دعا کرو
    اُس نے کہا کہ بات غلط مت کہا کرو

    میں نے کہا کہ رات سے بجلی بھی بند ہے
    اُس نے کہا کہ ہاتھ سے پنکھا جھلا کرو

    میں نے کہا کہ شہر میں پانی کا قحط ہے
    اُس نے کہا کہ سیون اپ پیا کرو

    میں نے کہا کہ کار ڈکیتوں نے چھین لی
    اُس نے کہا کہ اچھا ہے پیدل چلا کرو

    میں نے کہا کہ کام ہے نہ کوئی کاروبار
    اُس نے کہا کہ شاعری پر اکتفا کرو

    میں نے کہا کہ سو کی بھی گنتی نہیں ہے یاد
    اُس نے کہا کہ رات کو تارے گنا کرو

    میں نے کہا کہ غزل پڑھی جاتی نہیں صحیح
    اُس نے کہا کہ پہلے ریہرسل کیا کرو

    میں نے کہا کہ کیسے کہی جاتی ہے غزل
    اُس نے کہا کہ میری غزل گا دیا کرو

    ہر بات پر جو کہتا رہا میں ’’ بجا! بجا! ‘‘
    اُس نے کہا کہ یوں ہی مسلسل بجا کرو
    کہاں اتنی سزائیں تھیں بھلا اس زندگانی میں
    ہزاروں گھر ہوئے روشن جو میرا دل جلا محسنؔ


  2. #2
    Cute PaRi's Avatar
    Cute PaRi is offline ♥Häppïnëss ïs Süċċëss♥
    Join Date
    Sep 2012
    Location
    ♥ündër möthër's fëët♥
    Posts
    9,560
    Mentioned
    132 Post(s)
    Tagged
    9855 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    1533321

    Default

    bhot khob

    paspayi2 zps86d6ac40 - حالات شہر سے متاثر ہو کر

  3. #3
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,928
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    24
    Rep Power
    21474855

    Default



Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •