Results 1 to 7 of 7

Thread: Safal e Gar

  1. #1
    Join Date
    Apr 2010
    Location
    k, s, a
    Posts
    14,631
    Mentioned
    215 Post(s)
    Tagged
    10286 Thread(s)
    Thanked
    84
    Rep Power
    1503265

    Thumbs up Safal e Gar


    ’’درد مکڑی کا جالا ہوتا ہے۔ جتنا پھڑپھڑاؤ، جتنے ہاتھ مارو اسی قدر زیادہ تار لپٹتے چلے جاتے ہیں۔
    اسیری کا درجہ بڑھتا چلا جاتا ہے۔ واویلا کرنے سے درد کی شدت میں اضافہ ہوتا چلا جاتا ہے۔
    درد کے سامنے سرنگوں ہونا پڑتا ہے۔ پسپائی اختیار کرنی پڑتی ہے۔ سیس نوائے سے ہی درد گھٹتا ہے۔
    صوفیہ نے کبھی درد سے سمجھوتا نہیں کیا۔ وہ مزاحمت کرتی رہی اور اپنا درد بڑھاتی رہی۔
    یہاں تک کے درد نے اس کے سوچنے سمجھنے کی صلاحیت صلب کرلی۔ وہ کیا چاہتی تھی اور کیوں چاہتی تھی۔؟
    اس نے ان سوالوں کا گلا گھونٹ کر ان کی لاشیں اپنے اندر کہیں گہرائی میں دفن کر دی تھیں۔‘‘

    اقتباس:
    سفال گر
    تحریر:
    بشریٰ سعید


  2. #2
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,928
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    24
    Rep Power
    21474855

    Default



  3. #3
    Join Date
    Jan 2011
    Location
    pakistan
    Posts
    9,092
    Mentioned
    95 Post(s)
    Tagged
    8378 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    429513

    Default

    nice


  4. #4
    Join Date
    Sep 2013
    Location
    Karachi, Pakistan
    Posts
    7,419
    Mentioned
    507 Post(s)
    Tagged
    5438 Thread(s)
    Thanked
    359
    Rep Power
    874041

    Default

    ufff ..... khoob.... dardnaak!

  5. #5
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default

    nyc sharingggg





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  6. #6
    Join Date
    Apr 2012
    Location
    Beyond The Sky
    Posts
    1,478
    Mentioned
    55 Post(s)
    Tagged
    3259 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    214755

    Default

    Awesome ..............



    دل اگر بے نقاب ھوتے

    تو سوچو..! کتنے فساد ھوتے




  7. #7
    *jamshed*'s Avatar
    *jamshed* is offline کچھ یادیں ،کچھ باتیں
    Join Date
    Oct 2010
    Location
    every heart
    Posts
    14,586
    Mentioned
    138 Post(s)
    Tagged
    8346 Thread(s)
    Thanked
    4
    Rep Power
    21474858

    Default

    superb
    کہاں اتنی سزائیں تھیں بھلا اس زندگانی میں
    ہزاروں گھر ہوئے روشن جو میرا دل جلا محسنؔ


Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •