پشاور ( کاروان ڈیسک) کالعدم تحریک طالبان کے اہم کمانڈر اور سابق صدر پرویز مشرف پر حملے کے مجرم عدنان رشید کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ تحریک طالبان کے اہم کمانڈر کو جنوبی وزیریستان کے علاقے شکئی سے زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ عدنان رشید نے چار روز قبل شمالی ویزرستان میں فوج کے محاصرے سے بھاگنے کی کوشش کی تھی اور شدید زخمی ہو گئے تھے۔ اس دوران وہ جنوبی وزیرستان پہنچنے میں کامیاب رہے لیکن فورسز نے ان کا پیچھا کرتے ہوئے زخمی حالت میں گرفتار کر لیا۔ انہیں فورسز نے ہیلی کاپٹر کے ذریعے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے۔

عدنان رشید کا تعلق خیبر پختونخوا کے علاقے صوابی کے گاﺅں چھوٹا لاہور سے تھا اور 1997 میں انہوں نے پاک فضائیہ میں شمولیت اختیار کی۔ اسی دوران 2014 میں 24 سال کی عمر میں سابق صدر جنرل پرویز مشرف پر حملے کے الزام میں گرفتار ہوئے اور 2005 میں موت کی سزا ملی۔
for more detail visit
Karwan News