Results 1 to 4 of 4

Thread: اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا

  1. #1
    Join Date
    Mar 2015
    Location
    Karachi
    Posts
    726
    Mentioned
    6 Post(s)
    Tagged
    59 Thread(s)
    Thanked
    1
    Rep Power
    3

    Default اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا

    اب کس سے کہیں اور کون سنے جو حال تمہارے بعد ہوا
    اس دل کی جھیل سی آنکھوں میں اک خواب بہت برباد ہوا
    یہ ہجر ہوا بھی دشمن ہے اس نام کے سارے رنگوں کی
    وہ نام جو میرے ہونٹوں پر خوشبو کی طرح آباد ہوا
    اس شہر میں کتنے چہرے تھے کچھ یاد نہیں سب بھول گئے
    اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا
    وہ اپنے گاؤں کی گلیاں تھیں دل جن میں ناچتا گاتا تھا
    اب اس سے فرق نہیں پڑتا ناشاد ہوا یا شاد ہوا
    بے نام ستائش رہتی تھی ان گہری سانولی آنکھوں میں
    ایسا تو کبھی سوچا بھی نہ تھا دل اب جتنا بیداد ہوا
    (نوشی گیلانی)

    1 - اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا

  2. #2
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,928
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    24
    Rep Power
    21474855

    Default

    bu - اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا


  3. #3
    Join Date
    Sep 2013
    Location
    Mideast
    Posts
    5,905
    Mentioned
    213 Post(s)
    Tagged
    5074 Thread(s)
    Thanked
    176
    Rep Power
    10

    Default

    Excellent

  4. #4
    Join Date
    Feb 2010
    Location
    dubai
    Posts
    7,667
    Mentioned
    569 Post(s)
    Tagged
    8128 Thread(s)
    Thanked
    1274
    Rep Power
    214764

    Default

    zbrxt choice bht umda
    mera siggy mujhe nazarnahi aa raha...

    30abdx0 - اک شخص کتابوں جیسا تھا وہ شخص زبانی یاد ہوا

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •