Results 1 to 4 of 4

Thread: زندگی کی راہوں میں رنج و غم کے میلے ہیں

  1. #1
    Join Date
    Mar 2015
    Location
    Karachi
    Posts
    726
    Mentioned
    6 Post(s)
    Tagged
    59 Thread(s)
    Thanked
    1
    Rep Power
    3

    Default زندگی کی راہوں میں رنج و غم کے میلے ہیں

    زندگی کی راہوں میں رنج و غم کے میلے ہیں
    بھیڑ ہے قیامت کی پھر بھی ہم اکیلے ہیں
    گیسوؤں کے سائے میں ایک شب گزاری تھی
    آج تک جدائی کی دھوپ میں اکیلے ہیں
    سازشیں زمانے کی کام کرگئیں آخر
    آپ ہیں اُدھر تنہا، ہم اِدھر اکیلے ہیں
    کون کس کا ساتھی ہے، ہم تو غم کی منزل ہیں
    پہلے بھی اکیلے تھے، آج بھی اکیلے ہیں
    اب تو اپنا سایہ بھی کھوگیا اندھیروں میں
    آپ سے بچھڑ کے ہم کس قدر اکیلے ہیں
    (صبا افغانی)

    1 - زندگی کی راہوں میں رنج و غم کے میلے ہیں

  2. #2
    Join Date
    Dec 2014
    Location
    soudi arab makkah
    Age
    30
    Posts
    599
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    92 Thread(s)
    Thanked
    14
    Rep Power
    214753

    Default

    so nice

  3. #3
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    11,928
    Mentioned
    79 Post(s)
    Tagged
    2306 Thread(s)
    Thanked
    24
    Rep Power
    21474855

    Default

    zabardast


  4. #4
    Join Date
    Mar 2008
    Location
    Hijr
    Posts
    152,763
    Mentioned
    104 Post(s)
    Tagged
    8577 Thread(s)
    Thanked
    80
    Rep Power
    21474998

    Default

    Nice
    پھر یوں ہوا کے درد مجھے راس آ گیا

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •