Results 1 to 2 of 2

Thread: وجود سارا بکھر گیا ہے

  1. #1
    Join Date
    Jun 2010
    Location
    Jatoi
    Posts
    59,925
    Mentioned
    201 Post(s)
    Tagged
    9827 Thread(s)
    Thanked
    6
    Rep Power
    21474903

    Default وجود سارا بکھر گیا ہے



    وجود سارا بکھر گیا ہے
    یہ زخم بھی تو نکھر گیا ہے
    نمی نمی ہے پلک پلک تک
    کمی کمی ہے فلک فلک تک
    میرا جنوں بھی تو مر گیا ہے
    کہ دل محبت سے ڈر گیا ہے
    Last edited by sarfraz_qamar; 05-09-2015 at 11:32 PM.





    تیری انگلیاں میرے جسم میںیونہی لمس بن کے گڑی رہیں
    کف کوزه گر میری مان لےمجھے چاک سے نہ اتارنا

  2. #2
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    839 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1181
    Rep Power
    21474971

    Default

    nice
    صرف آواز نہیں ، لفظ بھی مقفل ہیں مرے

    سوچ میں ہوں کہ اب تجھ کو پکاروں کیسے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •