Results 1 to 3 of 3

Thread: Allah Insan Se Ghafil Nahi...

  1. #1
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    836 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1180
    Rep Power
    21474971

    candel Allah Insan Se Ghafil Nahi...

    کچھ روز سے حضور صلی اللہ علیہ وسلم پر وحی نازل نہیں ہورہی تھی
    حضور صلی اللہ علیہ وسلم شدید بے چینی محسوس کر رہے تھے
    ادھر کفار کے ہاتھ ایک موقع آگیا تھا تمسخر کیلیئے
    ابو لہب کی بیوی کہنے لگی: کہ اے محمد! لگتا ہے تیرے شیطان (معاذ اللہ) نے تجھے چھوڑ دیا ہے؟
    اب وہ تجھ پر کیوں اپنی وحی نازل نہیں کرتا؟
    حضور صلی اللہ علیہ وسلم پر یہ الفاظ بجلی بن کر گرتے
    آپ شدید کبیدہ دل ہوچکے تھے
    لیکن وحی تھی کہ نازل ہی نہیں ہورہی تھی۔
    آپ شدید دعائیں مانگ رہے تھے
    آپ کا خیال تھا کہ شاید اللہ آپ سے ناراض ہوگیا ہے
    آپ شدید معافیاں مانگ رہے تھے
    اللہ سے وحی کی طلب فرمارہے تھے
    لیکن
    آپ کا انتظار طویل ہوتا جارہا تھا
    آپ بیمار ہوگئے تھے
    بیماری کے سبب رات کا قیام بھی مشکل ہوچلا تھا
    ایسا محسوس ہوتا تھا جیسے دنیا میں کچھ باقی نہ بچا ہو۔
    سب کچھ بے مقصد و بے معنیٰ ہوچکا ہو۔
    آپ صلی اللہ علیہ وسلم کفار کے طعنوں سے کیا کم غمگین تھے
    کہ اللہ عزوجل کی طرف سے بھی کوئی جواب نہ آتا تھا۔
    امیدیں دم توڑتی نظر آرہی تھیں
    ایسے میں حضرت جبرائیل علیہ السلام اترتے ہیں
    اللہ عزوجل کا پیغام لے کر:“
    قسم ہے دھوپ چڑھتے وقت کی۔ قسم ہے رات کی جب وہ چھا جائے۔ نہ ہی آپ کے رب نے آپ کو چھوڑا اور نہ ہی دشمنی اختیار کی۔ اور آپ کا آنے والا دور آپ کے گزرے ہوئے دور سے بہتر ہوگا۔ اور عنقریب آپ کا رب آپ کو اتنا کچھ عطا فرمائے گا کہ آپ خوش ہوجائینگے۔
    سورہ ضحی آیۃ 1 تا 5
    ان آیات میں حضور صلی اللہ علیہ وسلم کو نہایت پیار سے اور قسم کی تاکید کے ساتھ تسلی دی گئی۔
    کہ آپ کبیدہ دل نہ ہوں آپ کے رب نے آپ کو ہرگز فراموش نہیں کیا۔
    ہمارے حضرت فرماتے تھے کہ اگرچہ یہ آیات نازل تو حضور صلی اللہ علیہ وسلم کے دور کی اس مخصوص حالت پر ہوئیں
    لیکن یہ آیات ہر انسان اپنے بارے میں سوچ سکتا ہے
    ہر انسان کے اوپر ایسا وقت آتا ہے جب وہ سوچنے لگتا ہے
    کہ اسے اس کے اللہ نے چھوڑ دیا ہے،
    وہ اسکی دعائیں نہیں سن رہا
    جب انسان کال ملا رہا ہوتا ہے
    لیکن دوسری طرف سے کوئی رسپانس نہیں آرہا ہوتا
    تب انسان شدید کبیدگی محسوس کرتا ہے
    بے چینی انتہا پر پہنچ جاتی ہے۔
    لیکن انسان کو سمجھ لینا چاہیئے
    کہ اس کا رب اس سے غافل نہیں ہے
    بلکہ وہ اس کی ساری دعائیں، گریہ و زاری سن رہا ہے
    اس کی بے چینی دیکھ رہا ہے۔
    اور عنقریب اس کو اتنا کچھ عطا فرمائیگا کہ وہ خوش ہوجائیگا

  2. #2
    Join Date
    Oct 2013
    Location
    Limits
    Posts
    5,975
    Mentioned
    667 Post(s)
    Tagged
    5699 Thread(s)
    Thanked
    544
    Rep Power
    1509699

    Default

    Alhamdulillah

  3. #3
    Join Date
    Apr 2010
    Location
    k, s, a
    Posts
    14,631
    Mentioned
    215 Post(s)
    Tagged
    10286 Thread(s)
    Thanked
    84
    Rep Power
    1503265

    Default

    Beshak
    subhanAllah

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •