Results 1 to 2 of 2

Thread: عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    17,846
    Mentioned
    1534 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5776
    Rep Power
    214771

    New5555 عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا


    عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا
    جب محبتیں کی ہیں، پھر کوئی گواہی کیا

    ہم رتوں کے مجرم ہیں، پَر ہوا کی نظروں میں
    تیری پارسائی کیا، میری بے گناہی کیا

    وصل کا کوئی لمحہ رائیگاں نہیں لیکن
    جو الگ نہ کرتا ہوں ایسا راستہ ہی کیا

    تم تو آنکھ والے تھے، عکس مِل گیا ہو گا
    میں سدا کا بے چہرہ، میرا آئینہ ہی کیا

    شب گزیدہ لوگوں کو نیند سے الجھنا ہے
    رات کی مسافت میں رزمِ صبح گاہی کیا

    جانے کب بگڑ جائیں، جانے کب سنور جائیں
    دستِ کوزہ گر میں ہیں اپنا آسرا ہی کیا

    تم سلیمؔ شاعر ہو، شہرتوں پہ مت جاؤ
    مسندِ فقیری پہ خبطِ بادشاہی کیا

    2gvsho3 - عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    17,846
    Mentioned
    1534 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5776
    Rep Power
    214771

    Default Re: عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا

    2gvsho3 - عجزِ خاکساری کیوں، فخرِ کجکلاہی کیا

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •