دمادم مست قلندر کی حکمت عملی بنا رہے ہیں:قائم علی شاہ
سابق وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ ''دمادم مست قلندر کی حکمت عملی بنا رہے ہیں‘‘ جبکہ ہمارا قلندر تو پہلے ہی مست ہے‘ بس ذرا اسے دمادم بنانا ہے؛ بشرطیکہ حکومت نے ہمارا پہلے ہی دمادم نہ کر دیا‘ تاہم ایک بار میرا بھی دمادم کیا گیا تھا‘ لیکن اس دوران میں سو گیا اور سارا دما دم بیچ ہی میں رہ گیا اور ساری مستی بھی ہرن ہو گئی تھی اور اب پورے صوبے کا اپنے آپ ہی دمادم ہو رہا ہے اور ایڈز ہے کہ پھیلتا ہی چلا جا رہا ہے؛ حالانکہ اس کے اندرہم خود ہی اس قدر پھیلے ہوئے تھے کہ ایڈز کی کوئی گنجائش ہی نہیں تھی اور اس کے علاوہ یہاں صرف پانی کا مسئلہ ہے ‘جسے صرف شرم سے پانی پانی ہو کر ہی حل کیا جا سکتا ہے۔ آپ اگلے روز خیرپور میں صحافیوں سے گفتگو کر رہے تھے۔

سرخیاں‘ متن اور ’’اردو سائنس میگزین‘‘
ظفر اقبال
کے کالم سے انتخاب