Results 1 to 2 of 2

Thread: عالمی کرکٹ میں سچن کے بیس سال

  1. #1
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Islamabad, UK
    Posts
    88,506
    Mentioned
    1028 Post(s)
    Tagged
    9706 Thread(s)
    Thanked
    603
    Rep Power
    21474934

    Default عالمی کرکٹ میں سچن کے بیس سال

    عالمی کرکٹ میں سچن کے بیس سال


    سچن تندولکر کا شمار دنیا کے بہترین کھلاڑیوں میں ہوتا ہے

    ہندوستانی کرکٹ کےگزشتہ بیس سال میں ٹیم میں بہت سے کھلاڑی آئے اور گئے لیکن سچن تندلکر کی جگہ نہ کوئی لے سکا ہے اور نہ ہی شاید لے سکے گا۔ کرکٹ تجزیہ کاروں اور شائقین کا کہنا ہے کہ سچن تندولکر جیسا کھلاڑی ایک صدی میں ایک ہی ہوتا ہے۔

    ہندوستان کے کرکٹ سٹار ماسٹر بلاسٹر سچن تندولکر نے 15 نومبر کو عالمی کرکٹ میں اپنے بیس سال پورے کرلیے ہیں۔

    سولہ سالہ سچن تندلکر نے پندرہ نومبر 1989 کو پاکستان کے خلاف کراچی میں پہلا عالمی میچ کھیلا تھا۔ اس کے بعد سچن نے کرکٹ کی دنیا میں جو کارنامے کیے ہیں وہ کرکٹ کی تاریخ کے سنہرے اوراق میں درج ہوچکے ہیں۔

    اپنے بیس سالہ کرکٹ کیریئر میں سچن تندولکر نے ہر وہ ریکارڈ اپنے نام کیا جو کسی بھی کرکٹر کا خواب ہوتا ہے۔ وہ اس وقت ٹیسٹ اور ایک روزہ کرکٹ میں نہ صرف سب سے زیادہ رنز بنانے والے کھلاڑی ہیں بلکہ انہوں سے ٹیسٹ اور ون ڈے میں سب سے زیادہ سنچریاں بنائی ہیں۔ تندولکر ٹیسٹ کرکٹ میں بیالیس سنچریوں کی مدد سے بارہ ہزار سے زائد جبکہ ایک روزہ میچوں میں پینتالیس سنچریوں کی مدد سے سترہ ہزار رنز بنا چکے ہیں۔

    عالمی کرکٹ میں سچن تندولکر کے بیس برس پورے ہونے پر نامور کھلاڑیوں نے انہیں مبارکباد دی ہے۔ سری لنکا کے بلے باز مہیلا جے وردھنے نے کہا: سچن کی سب سے اچھی بات یہ ہے کہ آج بھی ان میں رن بنانے کی اتنی ہی لگن ہے۔ ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان سورو گنگولی نے سچن کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا: سولہ سال کی عمر میں پہلا میچ کھیلنا اور 20 سال تک کھیلتے رہنا ایک حیرت انگیز بات ہے۔ ہم امید کرتے ہیں کہ وہ اور کچھ وقت تک کھیلتے رہیں۔

    ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے چیف سلیکٹر شری کانت نے سچن کو دنیا کا سب سے مقبول کھلاڑی قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ اپنے نرم رویے، سادگی اور لگن کی وجہ سے سچن اس مقام پر پہنچے ہیں۔

    ہندوستان کرکٹ ٹیم کے کپتان مہندر سنگھ دھونی نے خواہش ظاہر کی ہے کہ تندولکر کو کرکٹ کی دنیا میں اپنے بیس برس پورے ہونے کا جشن سولہ نومبر سے سری لنکا کے خلاف شروع ہونے والی ٹیسٹ سیریز میں سینچری بناکر منانا چاہیے۔ انہوں نے کہا: یہ اچھا موقع ہے کہ سچن اپنے کریئر کے بیس سال پورے ہونے پر ٹیسٹ کرکٹ میں ایک اور سینچری بنائیں۔

    سکول کے دنوں سے سچن اپنی کرکٹ کی صلاحیتوں کی وجہ سے جانے جاتے تھے۔ 1988 میں سکول میں انہوں نے ونود کامبلی کے ساتھ مل کر 664 رن کی شراکت قائم کی تھی جو کہ ایک عرصے تک عالمی ریکارڈ تھا۔

    فی الوقت سچن تندولکر اچھی فارم میں ہیں۔ حال ہی میں انہوں نے آسٹریلیا کے لیے خلاف شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے 175 رن بنائے تھے۔ صحافیوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا تھا: میں کرکٹ کا مزہ لے رہا ہوں اور ابھی مجھ میں کافی کرکٹ باقی ہے۔

    سچن تندولکر کہتے ہیں کہ ان میں ابھی کرکٹ کھیلنے کی بہت صلاحیت باقی ہے اور چاہتے ہیں کہ وہ اور کرکٹ کھیلیں۔ یہ صرف سچن ہی نہیں کرکٹ سے منسلک ہر شخص یہ چاہتا ہے کہ وہ اور کرکٹ کھیلے کیونکہ ان کے چاہنے والوں کا کہنا ہے کہ آج بھی اچھی کرکٹ کا مطلب ہے سچن کا کھیلنا۔

  2. #2
    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    125,914
    Mentioned
    836 Post(s)
    Tagged
    9270 Thread(s)
    Thanked
    1180
    Rep Power
    21474971

    Default Re: عالمی کرکٹ میں سچن کے بیس سال

    achi baat hai khailta rahey jab tak taqat hai
    صرف آواز نہیں ، لفظ بھی مقفل ہیں مرے

    سوچ میں ہوں کہ اب تجھ کو پکاروں کیسے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •