Results 1 to 2 of 2

Thread: ایک پہا ڑ اور گلہری

  1. #1
    Join Date
    Mar 2008
    Location
    Hijr
    Posts
    152,763
    Mentioned
    104 Post(s)
    Tagged
    8577 Thread(s)
    Thanked
    80
    Rep Power
    21474998

    candel ایک پہا ڑ اور گلہری

    کوئی پہاڑ یہ کہتا تھا اک گلہری سے
    تجھے ہو شرم تو پانی میں جا کے ڈوب مرے
    ذرا سی چیز ہے ، اس پر غرور ، کیا کہنا
    یہ عقل اور یہ سمجھ ، یہ شعور ، کیا کہنا!
    خدا کی شان ہے ناچیز چیز بن بیٹھیں
    جو بے شعور ہوں یوں باتمیز بن بیٹھیں
    تری بساط ہے کیا میری شان کے آگے
    زمیں ہے پست مری آن بان کے آگے
    جو بات مجھ میں ہے ، تجھ کو وہ ہے نصیب کہاں
    بھلا پہاڑ کہاں جانور غریب کہاں!
    کہا یہ سن کے گلہری نے ، منہ سنبھال ذرا
    یہ کچی باتیں ہیں دل سے انھیں نکال ذرا
    جو میں بڑی نہیں تیری طرح تو کیا پروا
    نہیں ہے تو بھی تو آخر مری طرح چھوٹا
    ہر ایک چیز سے پیدا خدا کی قدرت ہے
    کوئی بڑا ، کوئی چھوٹا ، یہ اس کی حکمت ہے
    بڑا جہان میں تجھ کو بنا دیا اس نے
    مجھے درخت پہ چڑھنا سکھا دیا اس نے
    قدم اٹھانے کی طاقت نہیں ذرا تجھ میں
    نری بڑائی ہے ، خوبی ہے اور کیا تجھ میں
    جو تو بڑا ہے تو مجھ سا ہنر دکھا مجھ کو
    یہ چھالیا ہی ذرا توڑ کر دکھا مجھ کو
    نہیں ہے چیز نکمی کوئی زمانے میں
    کوئی برا نہیں قدرت کے کارخانے میں

  2. #2
    Join Date
    Dec 2010
    Location
    اللہ کی پناہ میں
    Age
    24
    Posts
    764
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474843

    Default Re: ایک پہا ڑ اور گلہری

    Nice

    Thanks 4 sharing



    m - ایک پہا ڑ اور گلہریa - ایک پہا ڑ اور گلہریw - ایک پہا ڑ اور گلہری1947616s2ktk1vwe1 - ایک پہا ڑ اور گلہری



Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •