Results 1 to 5 of 5

Thread: عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

  1. #1
    Join Date
    Mar 2008
    Location
    ♥ ♥ ChaAnd K paAr♥ ♥
    Posts
    41,780
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    1314 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    21474887

    Default عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے
    وہ زندہ لوگ مرے گھر کے جیسے مر سے گئے

    ہزار طرح کے صدمے اٹھانے والے لوگ
    نہ جانے کیا ہوا اِک آن میں بکھر سے گئے

    بچھڑنے والوں کا دکھ ہو تو سوچ لینا یہی
    کہ اِک نوائے پریشاں تھے رہ گزر سے گئے

    ہزار راہ چلے پھر وہ رہ گزر آئی
    کہ اک سفر میں رہے اور ہر سفر سے گئے

    کبھی وہ جسم ہوا اور کبھی وہ روح تمام
    اسی کے خواب تھے آنکھوں میں ہم جدھر سے گئے

    یہ حال ہو گیا آخر تری محبّت میں
    کہ چاہتے ہیں تجھے اور تری خبر سے گئے

    مرا ہی رنگ تھے، تو کیوں نہ بس رہے مجھ میں
    مرا ہی خواب تھے تو کیوں مری نظر سے گئے

    جو زخم، زخم ِ زباں بھی ہے اور نمو بھی ہے
    تو پھر یہ وہم ہے کیسا کہ ہم ہنر سے گئے

    *~*~*~*ღ*~*~*~**~*~*~*ღ*~*~*~*

    2m4ccw6 - عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    *~*~*~*ღ*~*~*~**~*~*~*ღ*~*~*~*

  2. #2
    Join Date
    Nov 2010
    Location
    City of Rain And Tears
    Posts
    1,920
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474845

    Default Re: عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    Hazar tarah k sadmey uthanay walay log
    na janay huwa kia ek aan main bikher se gaiey

    nice sharing arslan bhai
    Sach Hai, Baja Hai ,Mujhsey Shikayat Janab Ki
    Seh Seh K Mainey Zulm,Hai Adat Kharab Ki

  3. #3
    Join Date
    Mar 2008
    Location
    ♥ ♥ ChaAnd K paAr♥ ♥
    Posts
    41,780
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    1314 Thread(s)
    Thanked
    2
    Rep Power
    21474887

    Default Re: عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے


    *~*~*~*ღ*~*~*~**~*~*~*ღ*~*~*~*

    2m4ccw6 - عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    *~*~*~*ღ*~*~*~**~*~*~*ღ*~*~*~*

  4. #4
    Join Date
    May 2010
    Location
    sea of thoughts
    Posts
    14,707
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    33 Thread(s)
    Thanked
    0
    Rep Power
    21474858

    Default Re: عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    یہ حال ہو گیا آخر تری محبّت میں
    کہ چاہتے ہیں تجھے اور تری خبر سے گئے

    مرا ہی رنگ تھے، تو کیوں نہ بس رہے مجھ میں

    مرا ہی خواب تھے تو کیوں مری نظر سے گئے


    khoobsorat sharing


  5. #5
    Join Date
    Oct 2009
    Location
    Failed State
    Posts
    50,102
    Mentioned
    2 Post(s)
    Tagged
    34 Thread(s)
    Thanked
    25
    Rep Power
    21474895

    Default Re: عذاب آئے تھے ایسے کہ پھر نہ گھر سے گئے

    2 parhi hain tmahre sharing abhi.. aur ye third..

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •