Dosto ki mehfil main aik Nazm hazir haya:


بارہ ربیع الاول

ہر اک سے روزِ محشر اسوہء سرکار پوچھے گا
بتاؤ
کون سی سنت کو دی تھی زندگی تم نے
پڑوسی کی خبر رکھی
کبھی سچ پر ڈٹے ہو تم
تدبر بھی کیا تم نے
خدا کا گھر کیا آباد
اور
انصاف سے رشتہ کبھی جوڑا
محبت کا کیا آباد کوئ آشیاں تم نے
کوئ مفلس کدہ تم نے
کہیں گے ہم۔۔۔
یقیناً
جشن اور ماتم کدے ہم نے۔۔۔

Har ik say roz e mahshar uswa e sarkaar poochega
Bataao....
Konsi sunnat ko di thi zindagi tum nay!
PaRosi ki khabar rakhi!
Kabhi sach par Datay ho tum!
Tadabbur bhi kia tum nay!
Khuda ka ghar kia aabaad..
Aor...
Insaf say rishta kabhi joRa!
Muhabbat ka kia abaad koi aashyaN tum nay!
Koi muflis kada tum nay..!
Kaheingay hum..
Yaqeenan..
Jashn aor matam-kaday hum nay..!