Results 1 to 2 of 2

Thread: اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے

  1. #1
    Join Date
    Feb 2010
    Location
    dubai
    Posts
    11,835
    Mentioned
    7562 Post(s)
    Tagged
    11727 Thread(s)
    Thanked
    3026
    Rep Power
    214771

    candel اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے

    اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے
    تیرا مجرم ہوں مجھے ڈوب کے مرجانے دے

    اے نئے دوست میں سمجھوں گا تجھے بھی اپنا
    پہلے ماضی کا کوئی زخم تو بھر جانے دے

    آگ دنیا کی لگائی ہوئی بجھ جائے گی
    کوئی آنسو میرے دامن پہ بکھر جانے دے

    زخم کتنے تیری چاہت سے ملے ہیں مجھ کو
    سوچتا ہوں کہ کہوں تجھ سے مگر جانے دے

    زندگی! میں نے اسے کیسے پرویا تھا نہ پوچھ
    ہار ٹوٹا ہے تو موتی بھی بکھر جانے دے

    ان اندھیروں سے ہی سورج کبھی نکلے گا
    رات کے سائے ذرا اور نکھر جانے دے
    Last edited by maya; 30-09-2018 at 12:32 PM.


    30abdx0 - اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے
    mera siggy koun uraa le gaya....

  2. The Following User Says Thank You to maya For This Useful Post:


  3. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    22,552
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5874
    Rep Power
    214777

    Default Re: اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے

    واہ
    بہت عمدہ
    2gvsho3 - اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •