سعودی جیلوں میں قید پاکستانیوں کا وطن واپسی کا سلسلہ شروع
a.jpg
سعودی عرب کی جیلوں میں قید پاکستانیوں کا وطن واپسی کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔ پانچ پاکستانی شہری رہائی ملنے کے بعد لاہور پہنچ گئے۔

دنیا نیوز ذرائع کے مطابق سعودی ائر کی پرواز سے جدہ سے لاہور پانچ پاکستانی شہری رہائی ملنے کے بعد لاہور پہنچ گئے ہیں۔ ایف آئی اے امیگریشن نے جانچ پڑتال کے بعد مسافروں کو گھروں کو جانے کی اجازت دے دی۔
لاہور ائیرپورٹ پر پہنچتے ہی پاکستانی شہریوں نے سجدہ شکر ادا کیا اور وزیراعظم عمران خان کی جانب سے قیدیوں کی رہائی کے حوالے سے سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے سامنے قیدیوں کا مسئلہ پیش کرنے کا خیر مقدم کیا۔ لاہور ائیرپورٹ پہنچتے ہی پانچوں قیدی آبدیدہ ہو گئے۔
یاد رہے کہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے کہا تھا کہ وہ سعودی عرب میں قید پاکستانی قیدیوں کی رہائی کو اپنا فرض سمجھتے ہیں۔ پاکستان میں اپنے کامیاب دورے سے قبل نور خان ایئربیس پر وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ آپ کی قیادت میں پاکستان ترقی کر رہا ہے۔ ہم آپ کی قیادت میں پاکستان کو بڑی معیشت دیکھ رہے ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ ترقی کے سفر میں ہم پاکستان کے ساتھ ہیں۔ پاکستان آئندہ سالوں میں بڑی معیشت بنے گا۔ انہوں نے کہا کہ میں پاکستانی قیدیوں کی رہائی اپنا فرض سمجھتا ہوں۔
سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے سعودی عرب میں قید 2107 پاکستانیوں کی رہائی کا حکم وزیراعظم عمران خان کی درخواست پر جاری کیا تھا۔
وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب میں قید پاکستانیوں کے مسائل کا ذکر سعودی ولی عہد سے کیا تھا۔ جواب میں ولی عہد محمد بن سلمان نے 24 گھنٹے مکمل ہونے سے پہلے 2 ہزار 107 پاکستانیوں کی رہائی کا فرمان جاری کر دیا۔