بھارت کی جارحیت کامنہ توڑ جواب دیاجائے گا،حسین محنتی
aa.jpg

کشمیر میں بھارتی مظالم پر عالمی ضمیر کومتوجہ،پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس بلایا جائے کشمیر میں جاری جدوجہد آزادی کی تحریک سے بھارت بوکھلاہٹ کا شکار ہے ، اجلاس

کراچی(اسٹاف رپورٹر)جماعت اسلامی سندھ کے امیر و سابق ایم این اے محمد حسین محنتی نے پلوامہ واقعہ کی آڑ میں مسلمانوں پر انسانیت سوز مظالم و دھمکیوں اور پاکستان کے خلاف بھارت کے جارحانہ عزائم کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کے عوام امن چاہتے ہیں، مسئلہ کشمیر کے حل کے بغیر خطے میں پائیدار امن کا قیام نا ممکن ہے ۔ انتخابی کشیدہ صورت حال کے پیش نظر بھارتی دھمکیوں کو سنجیدگی سے لیا جائے ۔اگر بھارت نے کسی جارحیت کا مظاہرہ کیا تو پوری قوم سیسہ پلائی ہوئی دیوار بن کر منہ توڑ جواب دے گی۔ یہ بات انہوں نے قبا آڈیٹوریم میں صوبائی نظم کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔صوبائی امیر محمد حسین محنتی نے زور دیا ہے کہ بھارت کی پاکستان مخالف سازشوں و جارحانہ عزائم کو ناکام بنانے کیلئے سفارتی کوششوں کو تیز، کشمیر میں انسانیت سوز مظالم پر عالمی ضمیر کو متوجہ اور پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس بلایا جائے ۔انہوں نے مزید کہا کہ بھارتی فوج نے کشمیری عوام پر مظالم کر کے انسانی حقوق کی پامالی اور انسانیت پر مظالم کی تمام حدیں پار کردی ہیں۔ کشمیر میں جاری جدوجہد آزادی کی تحریک اور نوجوانوں کے بڑھتے ہوئے شوق شہادت اور جذبہ جہاد کو دیکھ کر بھارت بوکھلاہٹ کا شکار ہے اور اب وہ اپنی ناکامیوں کو چھپانے کیلئے پاکستان پر الزام تراشیوں اور دھمکیوں پر اتر آیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گجرات کے قصائی نریندر مودی کے پاکستان و مسلمان دشمن اقدامات سے پوری دنیا واقف ہے۔