Results 1 to 2 of 2

Thread: نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,202
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    New5555 نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں


    نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں
    بہت دنوں سے ترا انتظار بھی تو نہیں
    تلافیِ ستمِ روزگار کون کرے
    تو ہم سخن بھی نہیں، راز دار بھی تو نہیں
    زمانہ پرسشِ غم بھی کرے تو کیا حاصل
    کہ اپنے دل پہ مجھے اختیار بھی تو نہیں
    تو ہی بتا کہ تری خاموشی کو کیا سمجھوں
    تری نگاہ سے کچھ آشکار بھی تو نہیں
    وفا نہیں نہ سہی، رسم و راہ کیا کم ہے
    تری نظر کا مگر اعتبار بھی تو نہیں
    اگرچہ دل تری منزل نہ بن سکا اے دوست!
    مگر چراغِ سرِ رہگزار بھی تو نہیں
    بہت فسردہ ہے دل، کون اس کو بہلاۓ
    اُداس بھی تو نہیں، بے قرار بھی تو نہیں


    2gvsho3 - نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,202
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    Default Re: نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں

    تو ہی بتا ترے بے خانماں کدھر جائیں؟
    کہ راہ میں شجرِ سایہ دار بھی تو نہیں
    فلک نے پھینک دیا برگِ گل کی چھاؤں سے دور
    وہاں پڑے ہیں جہاں خارزار بھی تو نہیں
    جو زندگی ہے تو بس تیرے درد مندوں کی
    یہ جبر بھی تو نہیں، اختیار بھی تو نہیں
    وفا ذریعۂ اظہارِ غم سہی ناصر
    یہ کاروبار کوئ کاروبار بھی تو نہ نہیں

    2gvsho3 - نصیب عشق دلِ بےقرار بھی تو نہیں

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •