Results 1 to 2 of 2

Thread: وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے

    وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے
    مشکیزے سے تیر کا رشتہ بہت پرانا ہے

    صبح سویرے رن پڑتا ہے اور گھمسان کا رن
    راتوں رات چلا جائے جس کو جانا ہے

    ایک چراغ اور ایک کتاب اور ایک امید اثاثہ
    اس کے بعد تو جو کچھ ہے وہ سب افسانہ ہے

    دریا پر قبضہ تھا جس کا اس کی پیاس عذاب
    جس کی ڈھالیں چمک رہیں تھیں وہی نشانہ ہے

    کاسہ شام میں سورج کا سر اور آواز ِ اذان
    اور آواز اذان کہتی ہے فرض نبھانا ہے

    سب کہتے ہیں اور کوئی دن یہ ہنگامہ دہر
    دل کہتا ہے ایک مسافر اور بھی آنا ہے

    ایک جزیرہ اس کے آگے پیچھے سات سمندر
    سات سمندر پار سنا ہے ایک خزانہ ہے
    ٭٭٭


    2gvsho3 - وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے

    2gvsho3 - وہی پیاس ہے وہی دشت ہے وہی گھرانا ہے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •