Results 1 to 2 of 2

Thread: اسی دو راہے پر

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 اسی دو راہے پر



    اسی دو راہے پر



    اب نہ اُن اونچے مکانوں میں قدم رکھوں گا
    میں نے اک بار یہ پہلے بھی قسم کھائی تھی
    اپنی نادار محبت کی شکستوں کے طفیل
    زندگی پہلے بھی شرمائی تھی جھنجلائی تھی

    اور یہ عہد کیا تھا کہ بہ ایں حال تباہ
    اب کبھی پیار بھرے گیت نہیں گاؤں گا
    کسی چلمن نے پکارا بھی تو بڑھ جاؤں گا
    کوئی دروازہ کھلا بھی تو پلٹ آؤں گا

    پھر ترے کانپتے ہونٹوں کی فسوں کار ہنسی
    جال بننے لگی، بنتی رہی، بنتی ہی رہی
    میں کھنچا تجھ سے ، مگر تو مری راہوں کے لیے
    پھول چنتی رہی، چنتی رہی، چنتی ہی رہی

    برف برسائی مرے ذہن و تصور نے مگر
    دل میں اک شعلۂ بے نام سا لہرا ہی گیا
    تیری چپ چاپ نگاہوں کو سلگتے پا کر
    میری بیزار طبیعت کو بھی پیار آ ہی گیا

    اپنی بدلی ہوئی نظروں کے تقاضے نہ چھپا
    میں اس انداز کا مفہوم سمجھ سکتا ہوں
    تیرے زر کار دریچوں کی بلندی کی قسم
    اپنے اقدام کا مقسوم سمجھ سکتا ہوں

    اب نہ اُن اونچے مکانوں میں قدم رکھوں گا
    میں نے اک بار یہ پہلے بھی قسم کھائی تھی
    اسی سرمایہ و افلاس کے دو راہے پر
    زندگی پہلے بھی شرمائی تھی جھنجھلائی تھی

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔



    2gvsho3 - اسی دو راہے پر

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: اسی دو راہے پر

    2gvsho3 - اسی دو راہے پر

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •