Results 1 to 2 of 2

Thread: ایک پرندہ اور جگنو

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    candel ایک پرندہ اور جگنو


    ایک پرندہ اور جگنو


    سر شام ایک مرغ نغمہ پیرا
    کسی ٹہنی پہ بیٹھا گا رہا تھا
    چمکتی چیز اک دیکھی زمیں پر
    اڑا طائر اسے جگنو سمجھ کر
    کہا جگنو نے او مرغ نوا ریز!
    نہ کر بے کس پہ منقار ہوس تیز
    تجھے جس نے چہک ، گل کو مہک دی
    اسی اللہ نے مجھ کو چمک دی
    لباس نور میں مستور ہوں میں
    پتنگوں کے جہاں کا طور ہوں میں
    چہک تیری بہشت گوش اگر ہے
    چمک میری بھی فردوس نظر ہے
    پروں کو میرے قدرت نے ضیا دی
    تجھے اس نے صدائے دل ربا دی
    تری منقار کو گانا سکھایا
    مجھے گلزار کی مشعل بنایا
    چمک بخشی مجھے، آواز تجھ کو
    دیا ہے سوز مجھ کو، ساز تجھ کو
    مخالف ساز کا ہوتا نہیں سوز
    جہاں میں ساز کا ہے ہم نشیں سوز
    قیام بزم ہستی ہے انھی سے
    ظہور اوج و پستی ہے انھی سے
    ہم آہنگی سے ہے محفل جہاں کی
    اسی سے ہے بہار اس بوستاں کی



    2gvsho3 - ایک پرندہ اور جگنو

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: ایک پرندہ اور جگنو

    2gvsho3 - ایک پرندہ اور جگنو

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •