Results 1 to 2 of 2

Thread: کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں

    کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں
    بے وفا ہے و ہ تو اس کو بے وفا ہو کر ملیں

    تلخیوں میں ڈھل نہ جائیں وصل کی اکتاہٹیں
    تھک گئے ہو تو چلو پھر سے جدا ہو کر ملیں

    پہلی پہلی قربتوں کی پھر اٹھائیں لذتیں
    آشنا آ پھر ذرا نا آشنا ہو کر ملیں

    ایک تو ہے سر سے پا تک سراپا انکسار
    لوگ و ہ بھی ہیں جو بندوں سے خدا ہو کر ملیں

    معذرت بن کر بھی اس کو مل ہی سکتے ہیں عدؔیم
    یہ ضروری تو نہیں اس کو سزا ہو کر ملیں



    2gvsho3 - کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں

    2gvsho3 - کیوں نہ ہم اس کو اسی کا آئینہ ہو کر ملیں

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •