Results 1 to 2 of 2

Thread: وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے

    وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے
    ہزار بار ملو پھر بھی آشنا نہ لگے
    کبھی وہ خاص عنایت کہ سَو گُماں گزریں
    کبھی وہ طرزِ تغافل کہ محرمانہ لگے
    وہ سیدھی سادی ادائیں کہ بجلیاں برسیں
    وہ دلبرانہ مروّت کہ عاشقانہ لگے
    دکھاؤں داغِ محبّت جو نا گوار نہ ہو
    سناؤں قصّۂ فرقت اگر برا نہ لگے
    بہت ہی سادہ ہے تو اور زمانہ ہے عیّار
    خدا کرے کہ تجھے شہر کی ہوا نہ لگے
    بجھا نہ دیں یہ مسلسل اداسیاں دل کی
    وہ بات کر کہ طبیعت کو تازیانہ لگے
    جو گھر اجڑ گۓ ان کا نہ رنج کر پیارے
    وہ چارہ کر کہ یہ گلشن اُجاڑ سا نہ لگے
    عتابِ اہلِ جہاں سب بھُلا دۓ لیکن
    وہ زخم یاد ہیں اب تک جو غائبانہ لگے
    وہ رنگ دل کو دۓ ہیں لہو کی گردش نے
    نظر اُٹھاؤں تو دنیا نگار خانہ لگے
    عجیب خواب دکھاتے ہیں ناخدا ہم کو
    غرض یہ ہے کہ سفینہ کنارے جا نہ لگے
    لیے ہی جاتی ہے ہر دم کوئ صدا ناصر
    یہ اور بات سراغِ نشانِ پا نہ لگے


    2gvsho3 - وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے

    2gvsho3 - وہ اس ادا سے جو آۓ تو یوں بھلا نہ لگے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •