Results 1 to 2 of 2

Thread: جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,188
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    New5555 جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے


    جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے
    ہم بھی اپنے سامنے سے ہٹ گئے

    رنگِ سرشاری کی تھی جِن سے رَسَد
    دل کی ان فصلوں کے جنگل کٹ گئے

    اک چراغاں ہے حرم میں دیر میں
    جشن اس کا ہے دل و جاں بٹ گئے

    شہرِ دل اور شہرِ دنیا الوداع
    ہم تو دونوں کی طرف سے کٹ گئے

    ہو گیا سکتہ خرد مندوں کو جب
    مات کھاتے ہی دوانے ڈٹ گئے

    چاند سورج کے عالم اور واپسی
    وہ ہوا ماتم کہ سینے پھٹ گئے

    کیا بتائیں کتنے شرمندہ ہیں ہم
    تجھ سے مِل کر اور بھی ہم گھٹ گئے


    2gvsho3 - جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,188
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    Default Re: جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے

    2gvsho3 - جب تری خواہش کے بادل چھٹ گئے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •