Results 1 to 2 of 2

Thread: ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی

    ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی
    نہ کوئی تذکرہ ہوگا نہ کوئی داستاں ہو گی

    اگر میں لوٹنا چاہوں تو کیا میں لوٹ سکتا ہوں
    وہ دنیا ساتھ جو میرے چلی تھی اب کہاں ہو گی

    پرندے اپنی منقاروں میں سب تارے چھپا لیں گے
    جوانی چار دن کی چاندنی ہے پھر کہاں ہو گی

    درختوں کی یہ چھالیں بھی اتر جائیں گی پتے کیا
    یہ دنیا دھیرے دھیرے ایک دن پھر سے جواں ہو گی

    ہوائیں روئیں گی سر پھوڑ لیں گی ان پہاڑوں سے
    کبھی جب بادلوں میں چاند کی ڈولی رواں ہو گی

    کسی معلوم تھا ہم لوگ اک بستر پہ سوئیں گے
    حفاظت کے لیے تلوار اپنے درمیاں ہو گی

    پسینہ بند کمرے کی امس کا جذب ہے اس میں
    ہمارے تولیے میں دھوپ کی خوشبو کہاں ہو گی

    کسی گمنام پتھر پر بہت سے نام لکھ دو گے
    تو قربانی ہماری اس طرح سے جاوداں ہو گی

    زمینیں تو مری اجداد نے ساری گنوا دی ہیں
    مگر یہ ایک مٹھی خاک خود اپنا نشاں ہو گی
    *** 

    2gvsho3 - ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی

    2gvsho3 - ہماری شہرتوں کی موت بے نام و نشاں ہو گی

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •