Results 1 to 2 of 2

Thread: پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے


    پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے

    وہ جس کی یاد سے دل کو کنارا ہی نہیں ہے

    محّبت کھیل ایسا تو نہیں ہم لَوٹ جائیں

    کہ اِس میں جیت بھی ہو گی خسارا ہی نہیں ہے

    کبھی وہ جگنوؤں کو مُٹھیوں میں قید کرنا

    مگر اب تو ہمیں یہ سب گوارا ہی نہیں ہے

    اب اس کے خال و خد کا ذکر کیا کرتے کِسی سے

    کہ ہم پر آج تک وہ آشکارا ہی نہیں ہے

    یہ خواہش تھی کہ ہم کُچھ دُور تک تو ساتھ چلتے

    ستاروں کا مگر کوئی اِشارا ہی نہیں ہے

    بہت سے زخم کھانے دل نے آخر طے کیا ہے

    تمھارے شہر میں اپنا گزارا ہی نہیں ہے

    2gvsho3 - پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے

    2gvsho3 - پلٹ کر پھر کبھی اُس نے پُکارا ہی نہیں ہے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •