Results 1 to 2 of 2

Thread: کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو



    نذرِ جالب


    کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو
    "جالب ھُن گل مُک گئی اے"، ھُن جان نوں ہی خیرات کرو

    کیسے کیسے دشمنِ جاں اب پرسشِ حال کو آئے ہیں
    ان کے بڑے احسان ہیں تم پر، اٹھو تسلیمات کرو

    تم تو ازل کے دیوانے اور دیوانوں کا شیوہ ہے
    اپنے گھر کو آگ لگا کر روشن شہر کی رات کرو

    اے بے زور پیادے تم سے کس نے کہا کہ یہ جنگ لڑو
    شاہوں کو شہہ دیتے دیتے اپنی بازی مات کرو

    اپنے گریباں کے پرچم میں لوگ تمہیں کفنائیں گے
    چاہے تم منصور بنو یا پیرویِ سادات کرو

    فیضؔ گیا اب تم بھی چلے تو کون رہے گا مقتل میں
    ایک فرازؔ ہے باقی ساتھی، اس کو بھی اپنے ساتھ کرو
    ٭٭٭



    2gvsho3 - کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو

    2gvsho3 - کب تک درد کے تحفے بانٹو، خونِ جگر سوغات کرو

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •