Results 1 to 2 of 2

Thread: غنیم سے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 غنیم سے


    غنیم سے

    مرے تن کے زخم نہ گِن ابھی
    مری آنکھ میں ابھی نور ہے
    مرے بازوؤں پہ نگاہ کر
    جو غرور تھا، وہ غرور ہے

    ابھی تازہ دم ہے مرا فرس
    نئے معرکوں پہ تُلا ہوا
    ابھی رزم گاہ کے درمیاں
    ہے مرا نشان کھلا ہوا

    تری چشمِ بد سے رہیں نہاں
    وہ تہیں جو ہیں مری ذات کی
    مجھے دیکھ قبضۂ تیغ پر
    ہے گرفت ابھی مرے ہاتھ کی

    وہ جو دشتِ جاں کو چمن کرے
    یہ شرف تو میرے لہو کا ہے
    مجھے زندگی سے عزیز تر
    یہ جو کھیل تیغ و گلو کا ہے

    تجھے مان جوشن و گُرز پر
    مرا حرفِ حق مری ڈھال ہے
    ترا جور و ظلم بلا سہی
    مرا حوصلہ بھی کمال ہے

    میں اسی قبیلے کا فرد ہوں
    جسے ناز صدق و یقیں پہ ہے
    یہی نامہ بر ہے بہار کا
    جو گلاب میری جبیں پہ ہے
    ٭٭٭


    2gvsho3 - غنیم سے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: غنیم سے

    2gvsho3 - غنیم سے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •