Results 1 to 2 of 2

Thread: فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے


    فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے
    مجھے سحر سے نئی ایک شام لینا ہے

    کسے خبر کہ فرشتے غزل سمجھتے ہیں
    خُدا کے سامنے کافر کا نام لینا ہے

    معاملہ ہے ترا بد ترین دُشمن سے
    مرے عزیز محبت سے کام لینا ہے

    مہکتی زُلف سے خوشبو ،چمکتی آنکھ سے دھُوپ
    شبوں سے جام ، سحر کا سلام لینا ہے

    تمہاری چال کی آہستگی کے لہجے میں
    سخن سے دل کو مسلنے کا کام لینا ہے

    نہیں میں میر کے در پر کبھی نہیں جاتا
    مجھے خُدا سے غزل کا کلام لینا ہے

    بڑے سلیقے سے نوٹوں میں اُس کو تلوا کر
    امیرِ شہر سے اب انتقام لینا ہے
    **



    2gvsho3 - فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے

    2gvsho3 - فلک سے چاند ، ستاروں سے جام لینا ہے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •