Results 1 to 2 of 2

Thread: جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہیں

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,202
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    Islam جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہیں


    جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہیں
    میرے آقا کے مجھ پر ہیں اتنے کرم اب کسی کے کرم کی ضرورت نہیں

    ہر طلوعِ سحر جن کے سائے تلے، جن کی آہٹ سے نبضِ دو عالم چلے
    اُن کے قدموں سے لگ کر ہوں بیٹھا ہوا مجھ کو جاہ و حشم کی ضرورت نہیں

    حُسنِ خلّاقِ کون و مکاں دیکھ لوں، جو نہ دیکھا کبھی وہ سماں دیکھ لوں
    مجھ کو آئینہِ مُصطفٰے چاہیے پتّھروں کے صنم کی ضرورت نہیں

    دُور سے آنے والی اس آواز پر، مَرمِٹوں جس میں ہو عشقِ خیرُالبَشر
    سُوئے خیرُالبَشر جو نہ لے کے چلے، اس نشانِ قدم کی ضرورت نہیں

    میری ہر سانس عشقِ نبی میں ڈھلے، یہ وہ سکّہ ہے عقبٰی میں بھی جو چلے
    صرف دنیا میں جو خرچ کی جا سکے مجھ کو ایسی رقم کی ضرورت نہیں

    کچھ نہ کرنی پڑےگی تلافی مجھے، مل ہی جائے گی حق سے مُعافی مجھے
    عشقِ شاہِ پیمبر ہے کافی مجھے رختِ راہِ عدم کی ضرورت نہیں

    کعب و حسّان کے ساتھ لائیں گے وہ، میری بخشش مُظؔفّر کرائیں گے وہ
    میں حبیبِ خدا کا پرستار ہوں مجھ کو محشر کے غم کی ضرورت نہیں

    کلام: مُظَفّر وارثی صدیقی
    مجموعہِ کلام: کعبہِ عشق

    2gvsho3 - جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہیں

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,202
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5861
    Rep Power
    214774

    Default Re: جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہی

    2gvsho3 - جَل رہا ہے مُحمّد ﷺ کی دہلیز پر ، دل کو طاقِ حرم کی ضرورت نہیں

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •