Results 1 to 2 of 2

Thread: ایک شام ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    candel ایک شام ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر


    ایک شام
    ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر )

    خاموش ہے چاندنی قمر کی
    شاخیں ہیں خموش ہر شجر کی
    وادی کے نوا فروش خاموش
    کہسار کے سبز پوش خاموش
    فطرت بے ہوش ہو گئی ہے
    آغوش میں شب کے سو گئی ہے
    کچھ ایسا سکوت کا فسوں ہے
    نیکر کا خرام بھی سکوں ہے
    تاروں کا خموش کارواں ہے
    یہ قافلہ بے درا رواں ہے
    خاموش ہیں کوہ و دشت و دریا
    قدرت ہے مراقبے میں گویا
    اے دل! تو بھی خموش ہو جا
    آغوش میں غم کو لے کے سو جا

    2gvsho3 - ایک شام  ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: ایک شام ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر

    2gvsho3 - ایک شام  ( دریائے نیکر 'ہائیڈل برگ ' کے کنارے پر

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •