Results 1 to 2 of 2

Thread: ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں

    ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں
    یہ دل کا ساتھ بہت دیر تک رہے گا نہیں

    ہمیں خبر تھی کوئی آنکھ نم نہیں ہو گی
    ہمارے غم میں کہیں کوئی دل دکھے گا نہیں

    ہمیں خبر تھی کہ اک روز یہ بھی ہونا ہے
    کہ ہم کلام کریں گے کوئی سنے گا نہیں

    ہماری دربدری جانتی تھی برسوں سے
    گھر جائیں بھی تو کوئی پناہ دے گا نہیں

    ہماری طرح نہ آئے گا کوئی نرغے میں
    ہماری طرح کوئی قافلہ لٹے گا نہیں

    نمود خواب کی باتیں شکست خواب کا ذکر
    ہمارے بعد یہ قصے کوئی کہے گا نہیں

    غریب شہر ہو یا شہر یار ہفت اقلیم
    یہ وقت ہے یہ کسی کے لیے رکے گا نہیں

    مگر چراغ ہنر کا معاملہ ہے کچھ اور
    یہ ایک بار جلا ہے تو اب بجھے گا نہیں
    ٭٭٭



    2gvsho3 - ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں

    2gvsho3 - ہمیں خبر تھی کہ یہ درد اب تھمے گا نہیں

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •