Results 1 to 2 of 2

Thread: زیرِ لب

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 زیرِ لب


    زیرِ لب

    کس بوجھ سے جسم ٹوٹتا ہے
    اِتنا تو کڑا سفر نہیں تھا
    دو چار قدم کا فاصلہ کیا
    پھر راہ سے بے خبر نہیں تھا
    لیکن یہ تھکن یہ لڑکھڑاہٹ
    یہ حال تو عمر بھر نہیں تھا

    آغازِ سفر میں جب چلے تھے
    کب ہم نے کوئی دیا جلایا
    کب عہدِ وفا کی بات کی تھی
    کب ہم نے کوئی فریب کھایا
    وہ شام وہ چاندنی وہ خوشبو
    منزل کا کسے خیال آیا

    تُو محوِ سخن تھی مجھ سے لیکن
    میں سوچ کے جال بُن رہا تھا
    میرے لئے زندگی تڑپ تھی
    تیرے لئے غم بھی قہقہا تھا
    اب تجھ سے بچھڑ کے سوچتا ہوں
    کچھ تُو نے کہا تھا! کیا کہا تھا
    ٭٭٭




    2gvsho3 - زیرِ لب

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: زیرِ لب

    2gvsho3 - زیرِ لب

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •